***۔۔۔۔۔۔ سکھر ۔۔۔۔۔۔***

39

سکھر (نمائندہ جسارت) ڈپٹی کمشنر سکھر رحیم بخش میتلو کے جانب سے رمضان المبارک کے دوران عوام کو سستی ومعیاری اشیاء خوردونوش فراہم کرنے کے لیے مختلف اشیاء خوردونوش کے نرخ مقرر کیے گئے۔ ضلعی انتظامیہ نے اشیائے خوردنوش کا نرخ اس طرح مقرر کیے ہیں آٹا ایکس مل 33.50 کلو ، آٹا ریٹل 36 روپے کلو ، میدہ 40 روپے ، سوجی 40 روپے، دال مسوری 40 روپے، دال مسوری ترکی 70 روپے کلو، دال مونگ دہلی ہوئی 90 روپے، دال ماش دھلی ہوئی 100روپے،دال ماش ثابت 100روپے، دال چنا پنجاب فی کلو90 روپے، دال چنا سندھ85 روپے، دال مہری دھلی ہوئی 65 روپے،دال مٹر 60 روپے ،بیسن 100 روپے ، لال مرچ 240 روپے،لال مرچ پسی ہوئی250 روپے، ہلدی188روپے،سفید زیرہ ،انڈیں 50 گرام25 روپے،ایرانی زیرہ30روپے، کالازیرہ 50 گرام 50 روپے، اس کے علاوہ کالی مرچ فی 50 گرام 40 روپے، بڑی الائچی انڈیں 50 گرام 60 روپے، چھوٹی الائچی 100 رو پے ،چاول کرنل پنجاب 100 روپے، چاول کرنل سندھ 95 روپے، چاول ٹوٹا پنجاب 55 روپے، چاول سپر سیلا پنجاب 135 روپے، چاول ایری 45 روپے، دودہ 85 روپے، دہی 95 روپے کلو، بڑا گوشت ہڈی والا 310 روپے، بغیر ہڈی والا 430 روپے، چھوٹا گوشت660 روپے ، مچھلی تیں کلو سے بڑی 400 روپے، مچھلی ایک کلو سے زیادہ 280 روپے اور ایک کلو 200 روپے، پھینی190 روپے کلو، سموسا 10 روپے،پکوڑے کلو 200 روپے، گڑ کلو65 روپے، کوکنگ آئل 130 روپے، اور برف 6 روپے ،مقرر کیئے گئے ، ڈپٹی کمشنر سکھر رحیم بخش میتلو نے دوکانداروں اور تاجروں کو تنبہیہ کی کہ حکومت کی جانب سے مقرر کردہ نرخ نا مہ نمایاں جگہ پر آویزاں کریں خلاف ورزی کے مرتکب افراد کے خلاف سخت کاروائی کرتے ہوئے بھاری جرمانہ عائد کیا جائے گا ۔ ڈپٹی کمشنر سکھر رحیم بخش میتلو نے کہا کہ رمضان المبارک کے دوران عوام کو مکمل ریلیف فراہم کرنے کے لیے بچت بازار لگائے جائیں اور لوگوں کو تمام اشیاء مقررہ سرکاری نرخ پر فروخت کی جائے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ رمضان المبارک کے مہینے میں اشیاء خوردونوش شام 05بجے کے بعد فروخت کرنے کی اجازت ہو گی ۔ ڈپٹی کمشنر سکھر نے تمام متعلقہ افسران کو ہدایت کی کہ اشیاء خوردونوش کے مقرر کردہ نرخوں پر فروخت کو یقینی بنانے کے لیے اپنی موجودگی کو یقینی بنائیں اور رمضان المبارک کے مقدس مہینے میں عوام کو ریلیف فراہم کرنے کے لیے فرائض ایمانداری کے ساتھ ادا کریں*سکھر ایوانِ صنعت و تجارت کی قائمہ کمیٹی برائے انڈسٹریزکا اجلاس سائٹ میں منعقد ہوا ۔ اجلاس میں گزشتہ اجلاس کی کارروائی اور طے پائے گئے اُمور پر پیشرفت کا جائزہ لیا گیا۔ چیئرمین کمیٹی حاجی نورالدین آگرہ والے ، نائب چیئرمین عرفان صمد، اراکین کمیٹی سجاد اللہ قریشی، کرنل (ر) محمد علی، کرنل (ر) سغیر احمد، محمد خالد کاکیزئی اور سیکریٹری ایوان اسرار حسین بھٹی اجلاس میں شریک ہوئے۔ اسٹیٹ انجینئر عبدالکریم ملانو نے سائٹ میں فراہمی ءِ آب اور ڈرینج لائنز کی صفائی کے اقدامات پر آگاہی دی۔ جبکہ کیرتھر کینال پر پمپنگ اسٹیشن کیلیے بڑے ٹرانسفارمر کی ضرورت کا اظہار کیا تاکہ انڈسٹریز کو پانی کی فراہمی اُن کی ضرورت کے مطابق کی جا سکے۔ ذخیرہ ءِ آب اور بالائی ٹنکی کی تعمیر اور صنعتوں کو واٹر سپلائی کا شیڈول اورجائزہ رپورٹ آئندہ اجلاس میں پیش کرنے کی ہدایت کی گئی۔اسٹیٹ انجینئر نے واٹر سپلائی کیلیے درکار نئے ٹرانسفارمر ، پمپنگ موٹر کی فراہمی جیسے اُمور اور واٹر سپلائی کی صورتحال مزید بہتر کرنے کیلیے 30 یوم کی مہلت طلب کی۔ اجلاس نے اسٹیٹ انجینئر کی کارروائیوں کو تسلی بخش قرار دیتے ہوئے مزید بہتری کیلیے تعاون فراہم کرنے کی یقین دہانی کروائی۔اسٹیٹ انجینئر نے مزید آگاہ کیا کہ اوپن ڈرینز اور ڈرین لائنز کی صفائی جبکہ واٹر اسٹوریج ٹینک کی مٹی نکالنے کیلیے درکار مشینری اور دیگر سہولت میئر سکھر بیرسٹر ارسلان اسلام شیخ نے فوری طور پر فراہم کی جس سے سائٹ کے عملے کو کام جلد مکمل کرنے میں مدد ملی* میئر سکھر بیرسٹر ارسلان اسلام شیخ نے شہر کے مختلف علاقوں گھنٹہ گھر ، میونسپل اسٹیڈیم اور بشیر آباد چوک پر رمضان بچت بازار لگانے کے فیصلے پر ڈپٹی کمشنر سکھر رحیم بخش میتلو کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ بچت بازار قائم ہونے سے شہریوں کو اشیاء خور و نوش سستے داموں میں مل سکیں گی اور شہری اس سے استفادہ حاصل کرسکیں گے* کمشنر سکھر ڈویژن ڈاکٹر محمد عثمان چاچڑ الیکشن 2018کے انتظامات کے حوالے سے 21مئی 2018 بروز ہ پیرکو صبح 10.00 اپنے آفس کے کانفرنس ہال میں ایک اجلاس کے صدارت کریں گے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں