امت مسلمہ اسوہ حسنہ پر عمل کرکے سرخرو ہو سکتی ہے،حافظ محمد ادریس

88

نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان حافظ محمد ادریس نے کہا کہ حضور کی ذات مبارک سے عشق ہمارے ایمان کا جُز ہے۔ حضورکو دونوں جہانوں کیلئے رحمت بنا کر بھیجا گیا ہے۔ اسوہ حسنہ پر عمل پیرا ہو کر ہی امت مسلمہ دونوں جہانوں میں سرخرو ہو سکتی ہے۔ آج کے پُر آشوب دور میں دین اسلام کو بدنام کرنے کی سازش جاری ہے۔ امت مسلمہ اپنی زندگیوں کو نبی اکرم کی سےرت میں ڈھال کر اسلام دشمنوں کی سازشوں کو مکڑی کا جالہ ثابت کرسکتی ہے ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے جماعت اسلامی زون نارتھ کراچی کے تحت الیون سی نزد بی اماں پارک نارتھ کراچی،حذیفہ مسجد گلشن معمار،غوثیہ مسجد دستگیرفیڈرل بی ایریا اور نارتھ ناظم آباد میں معززین کے ساتھ منعقدہ نشست میں ” سیرت النبی“ کے پروگرامات سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

جلسہ سیرت النبیﷺ سے نائب امیر جماعت اسلامی کراچی ڈاکٹر اسامہ رضی ، امیر زون طارق مجتبیٰ خان ، نائب امیر زون اسد اللہ، جنرل سیکرٹری علی ارشد و دیگر نے بھی خطاب کیا۔

حافظ محمد ادریس نے کہا کہ حضور کی سیرت ہم سب کے لئے ایک نمونہ ہے۔ حضور نے دعوت اور اچھے اخلاق کے ذریعے لوگوں کے دلوں کو جیتا۔ حضور نے آئین و حکومت کی تشکیل کی اور ملکی اور سیاسی معاملات دین اسلام کے عین مطابق چلائے ۔عدل و انصاف کا بہترین نظام قائم کیا جو آج تک ہمارے لئے تقلید کا بہترین نمونہ ہے ۔امت کو چاہئے کے وہ اپنی ذاتی خواہشات کو ترک کرکے حضور کے سنت و ذات کو ترجیح دے کیونکہ حضور کے احکامات اور سنت سے محبت ایمان کا تقاضا ہے۔

انہوں نے کہا کہ طاغوتی قوتیں مسلمانوں پر غلبہ حاصل کرکے کفر کے نظام کو دنیا پر مسلط کرنا چاہتی ہیں اور اسی اےجنڈے کی تکمےل کے لئے مسلمانوں کو پوری دنیا میں نشانہ بنایا جا رہا ہے لیکن امت مسلمہ پیغمبر کی سیرت پر عمل کرکے کفریہ سازش کو کسی صورت کامیاب نہیں ہونے دے گی۔ مسلمان موت سے نہیں گھبراتے، شہادت کو مومن کا زیور سمجھتے ہیں اور شہداءامت مسلمہ کے ماتھے کے جھومر ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اگر ہم اپنے ووٹوں سے خدا کا خوف رکھنے والے حکمران منتخب کریں گے تو اللہ کی رحمت سے ہمارے دامن بھر جائیں گے اور اسلام نافذ ہوگا، ملک میں خوشحالی آ جائے گی لیکن اگر چوروں، ڈاکوﺅں، قاتلوں اور بھتہ خوروں کا انتخاب کیا تو عذاب الہٰی سے ہمیں کوئی نہیں بچا سکتا۔ ڈاکٹر اسامہ رضی نے کہا کے رحمت اللعالمین کی سیرت دنیا کیلئے مشعل راہ ہے۔ نبی آخر الزماں حضرت محمد کو جس نے اپنا آئیڈیل بنایا وہ کبھی گمراہ نہیں ہوگا۔ ان کی زندگی پچھلے لوگوں، موجودہ اور آنے والوں کےلئے بھی مثال ہے۔ حضور نبی کریم گھٹا ٹوپ اندھیروں میں رحمت اللعالمین بن کر آئے اور باہم متصادم قوموں کو آپس میں شیرو شکر کر دیا۔

انہوں نے کہا ربیع الاول رسول اکرم سے اپنی محبتوں کو تازہ کرنے کا مہینہ ہے اس ماہ کا تقاضا ہے کہ ہم خود اسوہ حسنہ پر عمل کریں اور نظام مصطفٰی نافذ کرنے کے لئے عملی جدوجہد میں جماعت اسلامی کا ساتھ دیں، حقیقی اسلامی انقلاب ایک ایماندار اور صالح قیادت ہی لاسکتی ہے۔ امیر زون طارق مجتبیٰ نے کہا کے حضور نے انسانیت کو دنیاوی اور اخروی فلاح و نجات کا وہ راستہ دکھایا جس سے دکھی اور مصیبت زدہ انسانیت کے دکھوں کا مداوا ممکن ہو سکا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ