حیدرآباد جیسکو، ناہند گان کیخلاف گرینڈ آپریشن ،680 غیر قانونی کنکشن منقطع

43

 

حیدرآباد(اسٹاف رپورٹر) حیسکو ترجمان کے مطابق چیف ایگزیکٹو آفیسر حیسکو عبد الحق میمن کے احکامات پر بجلی چوروں اور نادہندگان کیخلاف حیسکو کا کریک ڈاؤن جاری ہے ۔گرینڈآپریشن کے تحت قاضی احمد ،سکرنڈ،دولت پور،سانگھڑ،ڈگری، سامارو، سجاول، بدین ،سہون، مٹیاری ودیگر علاقوں میں کارروائیوں کے دوران 680غیر قانونی کنکشن منقطع، جبکہ واجبات کی عدم ادائیگی پر 12عدد ٹیو ب ویل کے کنکشن منقطع کردیے گئے ہیں اس کے علاوہ 872نادہندہ صارفین کے کنکشن بھی منقطع کیئے گئے ہیں ۔واضح رہے کہ اس وقت حیسکو کے ٹوٹل68ارب 37کروڑ21لاکھ روپے کے واجبات ہیں ۔جس میں وفاقی اداروں پر 2 ارب 92کروڑ54لاکھ،صوبائی اداروں02 ارب 89 کروڑ52لاکھ روپے کے واجبات ہیں۔جبکہ نجی صارفین پر62ارب 55کروڑ 16لاکھ روپے ہیں ۔ جس کی وصولی کیلیے حیسکو انتظامیہ اپنے معزز صارفین سے اپیل کرتی ہے کہ واجبات کی ادائیگی مقررہ وقت پر کی جائے تاکہ بجلی کی فراہمی ہوسکے ، بصورت دیگر بجلی منقطع کرنے کے علاوہ سخت قانونی کارروائی بھی کی جائیگی۔ لہٰذاتمام نادہندہ صارفین اپنے ذمے حیسکو کے واجبات فوری ادا کریں بصورت دیگر بجلی کے کنکشن منقطع کردیے جائینگے۔حیسکو چیف نے کہا کہ جو صارف بجلی کا بل ادا کریگا اس کو بجلی ملے گی اور جو نادہندہ ہے اس کو بجلی نہیں دینگے۔ بجلی چوری کا خاتمہ ہماری اولین ترجیح ہے ،بجلی چور ملک اور قوم کا چور ہے اس کیخلاف ہماری جنگ جاری رہے گی۔عوام سے اپیل ہے کہ بجلی چوری کا خاتمے کیلیے حیسکو ٹیموں سے مکمل تعاون کریں ۔ واضح رہے کہ حیسکو چیف نے تمام افسران کو سختی سے ہدایات دے رکھی ہیں کہ کہیں بھی اگر بجلی چوری نظر آئی یا واجبات جمع نہ کرنے والے بجلی کے کنکشن چلتے ہوئے پائے گئے توفوری طور پر کارروائی کرتے ہوئے اس انچارج افسران / ملازمین کیخلاف سخت محکمہ جاتی کارروائی کی جائیگی ، جس کے تحت انہیں جزا و سزا کے عمل کے تحت نوکری سے بھی فارغ کیا جا سکتا ہے ۔ بجلی سے متعلق صارفین کی شکایات کے فوری حل کیلیے کھلی کچہریاں منعقد کی جائیں۔