بچوں میں غذائی قلت کے خاتمے کیلیے اقدامات کر رہے ہیں‘ ظفر مرزا

44

اسلام آباد (اے پی پی) وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا نے کہا ہے کہ ہم سب مل کر اپنے بچوں کو وہ مستقبل دیں جس کے وہ حق دار ہیں‘ بچوں میںغذائی قلت کے خاتمے کے لیے اقدامات کر رہے ہیں‘ زچگی معلومات میں بہتری آئی‘ 63 فیصد خواتین دوران حمل صحت کے مراکز میں آتی ہیں۔ یہ بات انہوں نے قومی غذائی سروے 2018ء کی اعلیٰ سطحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان قومی غذائی سروے کے نتائج میں دلچسپی لے رہے ہیں کیونکہ موجودہ حکومت عورتوں اور بچوں میں ناقص غذا جیسے بڑے مسائل کے حل کا عزم کر چکی ہے۔ ڈاکٹر ظفر مرزا نے کہا کہ نیشنل نیوٹریشن سروے کے مطابق پاکستان میں 5 سال تک کے40 فیصد بچے کوتاہ قداور 28 فیصد بچے کم وزن کا شکار ہیں‘ 14 فیصد مائیں کم وزن اور غذائی قلت کا شکار ہیں جبکہ پچھلے سروے کے مقابلے میں10 فیصد بہتری آئی ہے‘ صاف پانی کے پینے کی شرح میں اضافہ ہوا ہے البتہ صرف21 فیصد پانی مکمل محفوظ پایا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ زچگی کے متعلق معلومات میں بہتری آئی ہے‘ 63 فیصد خواتین دوران حمل صحت کے مراکز میں آتی ہیں جس سے نوزائیدہ بچوں کی شرح اموات میں کمی واقع ہوئی ہے۔