سنکیانگ میں حلال اشیا کے خلاف چینی حکام کا کریک ڈاؤن

73

بیجنگ (انٹرنیشنل ڈیسک) چینی حکام نے صوبہ سنکیانگ کے دارالحکومت میں حلال اشیا کے خلاف کریک ڈاؤن شروع کر دیا۔چینی حکومت کی جانب سے کارروائی کو شدت پسندی کے خلاف مہم قرار دیا گیا۔ سنکیانگ میں مسلمان کثیر تعداد میں آباد ہیں اور انہیں چینی حکومت کی طرف سے مذہبی پابندیوں کا سامنا ہے۔ اقوام متحدہ کے کے مطابق سنکیانگ میں 10 لاکھ کے قریب ایغور اور دیگر مسلمانوں کو ان کی سیاسی تربیت کے نام پر غیر قانونی جبری حراست میں رکھا گیا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ