نواز شریف کی ایک دن کیلیے حاضری سے استثنا کی درخواست منظور

91
لاہور، سابق وزیر اعظم نواز شریف ہائی کورٹ میں پیشی پر آرہے ہیں
لاہور، سابق وزیر اعظم نواز شریف ہائی کورٹ میں پیشی پر آرہے ہیں

اسلام آباد(آن لائن )نواز شریف کے خلاف العزیزیہ اسٹیل مل ریفرنس کی سماعت احتساب عدالت اسلام آباد کے جج ارشد ملک نے کی۔سابق وزیراعظم کے وکیل خواجہ حارث نے تفتیشی افسر محبوب عالم پر جرح کی،نوازشریف عدالت میں پیش نہیں ہوئے۔ جج ارشد ملک کے استفسار پر خواجہ حارث نے عدالت کو بتایا کہ لاہور ہائیکورٹ نے نواز شریف کو ذاتی حیثیت میں طلب کر رکھا ہے۔وکیل صفائی
کی نوازشریف کی ایک دن کے لیے عدالت حاضری سے استثنا کی درخواست منظور کر لی گئی۔ دوران جرح گواہ نے بتایا کہ سعودی حکام کو یاد دہانی کے 3 خطوط لکھے گئے، 2 خطوط سعودی حکام اور ایک سعودی سفیر کو لکھا، ایک سوال کے جواب میں گواہ نے بتایا کہ وہ لیٹر آف کریڈٹ اور العزیزیہ اسٹیل مل اور ہل میٹل اسٹبلشمنٹ پر اٹھنے والی لاگت کے بارے میں نہیں جانتے۔خواجہ حارث نے تفتیشی افسر سے جرح کرتے ہوئے پوچھا کہ کسی گواہ نے بتایا ہو کہ جب حسن اور حسین نواز برطانیہ میں زیرتعلیم تھے اس دوران کوئی رقم بھیجی ہو۔ مجبوب عالم نے بتایا کہ نہیں ایسا کسی نے نہیں بتایا۔ تفتیشی افسر نے دوران جرح بتایا کہ میاں نواز شریف 1999ء سے لے کر 2013ء تک کسی عہدے پر نہیں رہے، خواجہ حارث نے پوچھا کہ آپ نے کسی اور کیس کی تفتیش کی تو انہوں نے عدالت کو بتایا کہ میری تعلیم بی اے ہے،2007ء سے اس عہدے پر کام کر رہا ہوں، اس سے قبل کسی اور کیس کی تفتیش نہیں کی۔ عدالت نے العزیزیہ اسٹیل مل ریفرنس کی سماعت آج تک ملتوی کر دی۔ آج بھی خواجہ حارث العزیزیہ اسٹیل مل ریفرنس کے تفتیشی افسر محبوب عالم پر جرح جاری رکھیں گے ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ