متحدہ اپنی ڈوبتی کشتی بچانے کیلیے الزام تراشی کر رہی ہے، پیپلز پارٹی

44

کراچی (اسٹاف رپورٹر) پاکستان پیپلز پارٹی سندھ کے جنرل سیکرٹری وقار مہدی نے میئر کراچی وسیم اختر کی جانب سے پیپلز پارٹی کیخلاف بیان پر سخت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ میئر کراچی اپنی ڈوبتی کشتی کو بچانے کے لیے پیپلز پارٹی پر الزام تراشی کر کے خود کو صادق اور امین ظاہر کرنے کی ناکام کوشش کررہے ہیں۔ کراچی اور بالخصوص اردو بولنے والے جان چکے ہیں کہ کس طرح اردو بولنے والوں کے نام پر سیاست چمکانے والوں نے اس قوم کر صدیوں پیچھے دھکیل دیا ہے اور اس قوم کے حقوق غصب کیے گئے اور علاقوں کوتباہ وبرباد کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ ایم کیو ایم نے جس طرح کراچی میں اردو بولنے والوں کا استحصال کیا اور کراچی کو اندھیروں کا شہر بنانے میں کلیدی کردار ادا کیا وہ کبھی بھلایا نہیں جاسکتا۔ ایم کیو ایم دہشت گردی ، غنڈہ گردی، بھتہ خوری اور بد معاشی ختم ہونے کے بعد سہارا تلاش کررہی ہے اور الزام تراشی پر اتر آئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایم کیو ایم شروع سے آج تک پاکستان میں قائم تمام حکومتوں کے ساتھ
حصہ دار رہی ہے کبھی وفاق میں کبھی سندھ میں مگر 30دہائیوں سے حکومت کے مزے لوٹنے والوں نے آج تک ملکی ترقی اور عوام کی فلاح کے لیے کوئی کام نہیں کیابلکہ عوامی کاموں میں روڑے ہی اٹکائے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایم کیو ایم کے پہلے میئر فاروق ستار ، سٹی ناظم مصطفی کمال اور اب میئر وسیم اختر کراچی کے تباہی کے ذمے دار ہیں، وسیم اختر کا بیان عوام کے آنکھوں میں دھول جھونکنے کے مترادف ہے۔کراچی کو تباہی سے دوچار کرنے کا سہرا ایم کیو ایم کے سر جاتا ہے کراچی کی معاشی اور انتظامی صورتحال کو خراب کرنے میں ایم کیو ایم پیش پیش رہی ہے، کراچی کا انفرااسٹرکچرتباہ کیا، بلدیاتی اداروں میں دہشت گردوں کو بھرتی کیا گیااور اداروں کو تباہ وبربادکر دیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان کے عوام 12مئی کا خونی دن نہیں بھولے ہیں اور میئر کراچی وسیم اختر کے ہاتھ کراچی کے شہریوں کے خون سے رنگے ہوئے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ