چنیوٹ‘رمضان شوگر ملز کے باہر کاشتکاروں اور زمینداروں کا احتجاجی دھرنا 

37

چنیوٹ(آئی این پی) رمضان شوگر ملز کے باہر کاشتکاروں اور زمینداروں کا احتجاجی دھرنا ‘نکاسی کیلیے نکلنے والا زہریلا پانی بند کرنے کا مطالبہ۔ تفصیلات کے مطابق کسان بورڈچنیوٹ کے زیر اہتمام سینکڑوں کسانوں نے رمضان شوگر کے ملز کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا اور ملز انتظامیہ کے خلاف شدید نعرے بازی کی اس موقع کسان بورڈ چنیوٹ کے سرپرست سید نورالحسن شاہ ، چیئرمین محمد طفیل لونا، شہباز حسینی ایڈووکیٹ لیگل ایڈوائزر اور دیگر رہنماؤں نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ رمضان شوگر ملز اور مدینہ شوگر ملز میں لگنے والے ڈسٹرلی پلانٹ سے نکلنے والا گندہ اور مضر صحت پانی کیلیے پائپ لائنیں بچھائی جارہی ہیں جن کے ذریعے ملز کا زہریلا پانی نہروں اور دریاؤں میں جائے گا اس سے ماحولیاتی آلودگی اور آبی جانور مریں گے ہمارا مطالبہ ہے کہ فوری طور پر اس نالے کی تعمیر کو روکا جائے اور ڈسٹرلی پلانٹ کو بند کیا جائے مقررین کا مزید کہنا تھا کہ رمضان شوگر ملز اور فیصل آباد روڈ پر واقع مدینہ شوگر ملز کے ارد گرد علاقہ مکین ماحولیاتی آلودگی کی وجہ سے سانس گلے جیسی دیگر موذی بیماریوں کا شکار ہو رہے ہیں اگر ملز انتظامیہ نے ان پلانٹ کو بند نہ کیا تو پھر سخت احتجاج کیا جائے گا علاوہ ازیں ڈپٹی کمشنر چنیوٹ سید امان انور بھی موقع پر پہنچ گئے اور احتجاج کرنے والے کسان بورڈ کے نمائندوں سے مذاکرات کیے اور ان کو ہر ممکن تعاون کی یقین دہانی کروائی جس پر مظاہرین نے اپنا احتجاج ختم کر دیا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.