ویسٹ زون میں ویمن اینڈ چلڈرن پروٹیکشن ڈیسک کا باقاعدہ افتتاح

44

کراچی ( اسٹاف رپورٹر ) آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ نے ویسٹ زون میں وومن اینڈ چلڈرن پروٹیکشن ڈیسک کا باقاعدہ افتتاح کیا۔ تقریب میں ڈی آئی جی ویسٹ ایس ایس پی ویسٹ اور سینٹرل سمیت دیگر سینئر پولیس افسران نے شرکت کی۔اس موقع پر آئی جی سندھ نے کہا کہ خواتین اور بچوں کا جنسی استحصال ایک سنگین جرم ہے جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔انہوں نے کہا کہ فی زمانہ ضرورت اس امر کی ہے کہ شہری ایسے واقعات کو چھپانے یا ان پر پردہ ڈالنے کے بجائے آگے آکر ایسے جرائم میں ملوث عناصر کے خلاف متعلقہ پولیس کو آگاہ کریں اور باقاعدہ شکایات درج کرائیں تاکہ اس حوالے سے فوری پولیس
کارروائی اور انسدادی اقدامات یقینی ہوسکیں۔انہوں نے کہا کہ وومن اینڈ چلڈرن ڈیسک کے قیام کا مقصد ہی خواتین اور بچوں کے ساتھ ہونے والے مختلف نوعیت کے واقعات کو ناصرف روکنا بلکہ ملوث عناصر کو کیفرکردار تک پہنچانا بھی ہے۔ آئی جی سندھ نے کہا کہ میں آپ لوگوں کو یہ خوشخبری دینا چاہتا ہوں وومن اینڈ چلڈرن ڈیسک پر کام کرنیوالے اسٹاف کی ماہانہ تنخواہ دگنی ہوگی تاہم اس ڈیسک پر ان ہی ملازمین کو کام کرنے کا موقع دیا جائے گا جو حقیقی معنوں میں انسانیت کی خدمت کا جذبہ اور اہلیت رکھتے ہوں گے۔ آئی جی سندھ کا کہنا تھا کہ خواتین اور بچوں سے متعلق پولیس کی جانب سے درج مقدمات کی تفتیش وومن اینڈ چلڈرن پروٹیکشن ڈیسک پر تعینات خواتین افسران ہی کریں گی۔بعدازاں آئی جی سندھ نے ویسٹ زون میں ضلع وسطی کے کمانڈ اینڈ کنٹرول روم اور انٹیگریٹڈ بیلسٹک آئیڈینٹی فیکیشن سسٹم (IBIS)ٹرمینل کا بھی افتتاح کیا اور موقع پر موجود پولیس افسران کو ضروری ہدایات دیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ