بھارت میں ماحولیاتی آلودگی 12 لاکھ افراد کی جان لے جاتی ہے

98

بھارت میں گرین پیس گلوبل آرگنائزیشن کے نمائندہ دفتر نے اعلان کیا ہے کہ بھارت میں ماحولیاتی آلودگی کی وجہ سے سالانہ بارہ لاکھ افراد موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں۔

بھارت میں گرین پیس گلوبل آرگنائزیشن کے نمائندہ دفتر نے اپنے تازہ ترین بیان میں کہا ہے کہ گاڑیوں اور کارخانوں کے دھوؤں کی وجہ سے سب سے زیادہ آلودگی ہوتی ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ ہندوستان کے صرف جنوبی علاقوں کے ہی چند شہروں میں ماحولیاتی آلودگی نہیں پائی جاتی۔

گرین پیس گلوبل آرگنائزیشن نے ماحولیاتی آلودگی کو ہندوستان کی سلامتی اورمعیشت کے لئے سب سے بڑا بحران قراردیا اورکہا کہ بہت سے لوگ ہندوستان میں ماحولیاتی آلودگی کی وجہ سے موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ ہندوستان کا دارالحکومت نئی دہلی کی فضا میں سب سے زیادہ آلودگی اور زہریلی گیس پائی جاتی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ