پاکستان کا کروزمیزائل بابرتھری کا کامیاب تجربہ

91

پاکستان نے کروز میزائل بابر تھری کا کامیاب تجربہ کر لیا ۔ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے قوم اور تجربہ کرنے والی ٹیم کو مبارکباد دی ہے ۔

ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور کی طرف سے جاری ہونے والے بیان کے مطابق  بابر تھری کروز میزائل کا تجربہ بحیرہ ہند کے خفیہ مقام پر کیا گیا، جس نے خشکی میں اپنے ہدف کو کامیابی سے نشانہ بنایا۔ ایڈوانس اور جدید ٹیکنالوجی سے لیس کروز میزائل بابر تھری 450 کلو میٹر تک اپنے ہدف کو کامیابی سے نشانہ بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

cruise-missile-babur-3-test-fired-by-pakistan-2

ترجمان آئی ایس پی آر کے مطابق چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی جنرل زبیر محمود حیات، ڈی جی اسٹرٹیجک پلان ڈویژنز لیفٹیننٹ مظہر جمیل، کمانڈر نیول اسٹرٹیک فورس کمانڈ اور دیگر سینیئر افسران نے میزائل ٹیسٹ کا تجربے کا مشاہدہ کیا ، میزائل کے کامیاب تجربے پر تینوں مسلح افواج کے سربراہان نے ٹیم کو مبارکباد دی، جبکہ چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی جنرل زبیر محمود حیات نے بھی قوم کو مبارکباد پیش کی۔

cruise-missile-babur-3-test-fired-by-pakistan-3

یاد رہے کہ گزشتہ سال دسمبر میں پاکستان نے زمین اور سمندر میں 700 کلومیٹر تک اپنے ہدف کو نشانہ بنانے والے کروز میزائل ‘بابر ٹو’ کا بھی کامیاب تجربہ کیا تھا۔آئی ایس پی آر کا کہنا تھا کہ مقامی طور پر تیار کردہ کروز میزائل زمین اور سمندر میں 700 کلو میٹر تک اپنے ہدف کو نشانہ بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔اس کے علاوہ کروز میزائل ‘بابر ٹو’ اسٹیلتھ ٹیکنالوجی اور نیویگیشن ٹیکنالوجی کا بھی حامل ہے، جبکہ یہ جی پی آر ایس نیویگیشن کی غیر موجودگی میں بھی اپنے ہدف کو کامیابی سے نشانہ بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

بیان میں مزید کہا گیا کہ میزائل کئی قسم کے جنگی ہتھیار لے جانے کی صلاحیت رکھتا ہے اور نچلی پرواز کرسکتا ہے،دوسری جانب وزیراعظم نوازشریف نے بھی میزائل کے کامیاب تجربے پر قوم کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا ہے کہ بابر تھری کا کامیاب تجربہ مہارت اور دفاع کی ضمانت ہے، پاکستان نے ہمیشہ پرامن پالیسی کو فروغ دیا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ