عدالت عظمیٰ: میمو گیٹ اسکینڈل سماعت کیلیے مقرر، حکومت کو نوٹس جاری

52

اسلام آباد ( نمائندہ جسارت) عدالت عظمیٰ نے میمو گیٹ اسکینڈل سماعت کے لیے مقرر کرتے ہوئے اٹارنی جنرل اور ایڈیشنل اٹارنی جنرل کو نوٹس جاری کردیا ہے ۔ چیف جسٹس کی سربراہی میں 3 رکنی بینچ جمعرات کو سماعت کرے گا ، سیکرٹری خارجہ اور داخلہ کو بھی آئندہ سماعت پر طلب کرلیا ۔عدالت عظمیٰ نے این آئی سی ایل کیس کی درخواست ناقابل سماعت قراردیتے ہوئے خارج کردی اور درخواست گزار پر30 ہزار روپے جرمانہ عاید کردیا۔ چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ ہم اس ملک کو سفارش کے عذاب
سے نجات دلائیں گے اب سفارش کرانے کے کلچرکو ختم ہونا چاہیے ۔سماعت کے آغاز پرچیف جسٹس نے استفسار کیا کہ معاملہ ٹرائل کورٹ میں زیر التوا ہے، پھرایک اوردرخواست کیوں آگئی عدالت میں بتایا گیا کہ درخواست آئی کہ عدالت نے تاثردیا ملزمان کے خلاف کارروائی کی جائے ۔چیف جسٹس نے کہا کہ ہم نے کوئی تاثرنہیں دیا۔انہوں نے ریمارکس دیے کہ آپ کے مؤکل اورآپ کے ذہن میں بلا جواز یہ تاثر آگیا، ہم درخواست گزار کو توہین عدالت کا نوٹس جاری کرتے ہیں۔چیف جسٹس نے کہا کہ اس کی جرأت کیسے ہوئی عدالت عظمیٰ میں ایسی درخواست کی۔ عدالت نے درخواست گزارکو30 ہزار روپے جرمانے کی رقم ڈیم فنڈ میں دینے کا حکم دے دیا جبکہ عدالت نے ریلوے اراضی ملکیت سے متعلق کیس میں چاروں صوبائی چیف سیکرٹریز کو نوٹس جاری کرتے ہوئے کیس کی سماعت غیر معینہ مدت تک ملتوی کردی ہے ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ