لاہور ہائیکورٹ‘ نیب آرڈیننس آئین کے تحت ایک مؤثر قانون ہے

46

لاہور(نمائندہ جسارت ) ہائی کورٹ نے نیب آرڈیننس کے تحت نواز شریف، مریم نواز اور کیپٹن (ر) صفدر کی سزاؤں کیخلاف درخواستوں پر تفصیلی فیصلہ جاری کردیا ،ہائیکورٹ کے فل بنچ نے نیب آرڈیننس کو آئین کے تحت ایک موثر قانون قرار دے دیا۔ لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس شاہد وحید کی سربراہی میں 3رکنی فل بنچ نے 24 صفحات پر مشتمل فیصلہ جاری کیا۔ فل بنچ نے قرار دیا کہ نیب آرڈیننس اس وقت لاگو ہے اس کو نہ تو ختم کیا گیا ہے اور نہ ہی اس میں کوئی تبدیلی کی گئی۔نیب آرڈیننس اس وقت تک برقرار ہے جب تک اس میں ترمیم نہ ہو یا اسے کسی دوسرے قانون سے تبدیل نہ کیا جائے، اے کے ڈوگر ایڈووکیٹ اور دیگر نے نیب آرڈیننس کی قانونی حیثیت کو چیلنج کیا تھا۔ درخواست میں کہا گیا تھا کہ مردہ قانون کے تحت نواز شریف اور خاندان کے افراد کو سزا نہیں دی جاسکتی۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.