الیکشن2018ء کا اہم ریکارڈ’’ردی‘‘  میں فروخت کردیا گیا

32

اسلام آباد(آن لائن)الیکشن 2018ء کوگزرے ایک ماہ بھی نہ ہوا کہ انتخابات سے جڑا ریکارڈ ردی میں بکنے لگا ہے،اسلام آباد کے تندوروں میں گرم سلگتی روٹیاں فارم 46کی کاپیوں میں لپیٹ کر دی جانے لگیں۔معلومات کے مطابق اسلام آباد کے سیکٹر جی سیون اور جی نائن میں متعدد
تندروں پر روٹیاں لپیٹ کر ایسے کاغذات دیئے گئے جو کہ عام انتخابات 2018ء سے متعلق اہم جزو تھے ۔اس موقع پر تندروں پر موجود ردی سٹاک میں پریزائیڈنگ آفیسر اور سینئر اسسٹنٹ کی تربیت سے متعلق ریکارڈ بھی موجود تھا اور ان فارمز پر الیکشن کمیشن آف پاکستان اور پریزائیڈنگ افسران میں آرٹی ایس سے متعلق بھی تاثرات موجود تھے اور ان پرپریزائیڈنگ افسران کو غیر معیاری اور غیر اطمینان بخش کھانا فراہم کیے جانے سے متعلق شکایات درج تھیں اور متعدد جگہوں پر جنریٹر اور یوپی ایس کی سہولت نہ ہونے کی بھی شکایات بتائی گئی تھیں۔ایسے قیمتی اور سیکرٹ ریکارڈ کو تندوروں پر ردی کے بھاؤ بیچنے پر تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے اور ذرائع کا کہنا ہے کہ الیکشن کمیشن آف پاکستان نے قیمتی ریکارڈ کے باہر جانے سے متعلق معلومات اکٹھی کرنا شروع کردی ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.