پاکستان قومی یکجہتی فورم کے تحت سمینار

124

صحافت کے لیے ہمارے پاس بہترین معیاریہ ہےکہ جب بھی ہمارے پاس کوئی خبر آئے تو پہلے اس کی تصدیق کریں، پھراس کو آگے بڑھائیں۔ ہمارا دین بھی ہمیں اس کا سبق دیتا ہے کہ پہلے تحقیق کرو پھر نشر کرو۔ ان خیالات کا اظہار ارشد منیر قونصلر پریس پاکستان قونصلیٹ (جدہ) نے پاکستان قومی یکجہتی فورم (پی این ایس ایف) کے زیر اہتمام سمینارمیں اپنے صدارتی خطاب میں کیا جس کا عنوان تھا ’پاکستان کی قومی یکجہتی میں پاکستانی میڈیا کا کردار‘۔ انہوں نے یکجہتی فورم کے بانی چیئرمین سید ریاض حسین بخاری کو سمینار کے انعقاد پر مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ آج یہاں پر پاکستان کی تمام بڑی سیاسی جماعتوں اور سماجی تنظیموں کے نمائندے جمع ہیں جو یکجہتی کا ثبوت ہے کہ ملک سے باہر سب پاکستانی ایک ہیں اور ملک کے مسائل کے حل میں ایک ہی طرح سے سوچتے ہیں۔ قومی یکجہتی حوالے سے میڈیا کا کردار بہت زیادہ ہے۔ انہوں نے شہید برہان وانی کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ آج کشمیری مجاہد کی دوسری برسی ہے ۔ اس نوجوان نے بھی سوشل میڈیا کے ذریعے کشمیر کی آزادی کی تحریک میں نئی روح پھونکی تھی۔
قبل ازیں پی این ایس ایف کے بانی رکن خالد چاہل نے تلاوت قرآن پاک سے تقریب کا آغاز کیا۔ فورم کے بانی چیئرمین ریاض بخاری نے نظامت کے فرائض انجام دیتے ہوئے تمام مہمانوں کا خیر مقدم کیا۔ انہوں نے صحافت کے اعلی معیار پر پاکستان جرنلسٹ فورم کے اراکین کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئےتوقع ظاہر کی کہ جس طرح پی جے ایف سے منسلک پاکستانی میڈیا کے نمایندے ملک عزیز کی نیک نامی کے لیے کام کرتے ہیں، اسی طرح پاکستان میں بھی صحافی اسی محب وطنی کا مظاہرہ کریں۔
مہمان خصوصی پاکستان جرنلسٹس فورم (پی جے ایف)جدہ کے چیئرمین امیر محمد خان یکجہتی فورم کا شکریہ ادا کرتے ہوئے اس بات کا اعادہ کیا کہ جرنلسٹ فورم کے تمام اراکین پاکستان کمیونٹی اور پاکستان کی خدمت کے لیے ہمیشہ تیار ہیں۔
تقریب سے جرنلسٹ فورم کے صدر شاہد نعیم، جنرل سیکرٹری جمیل راٹھور، جماعت اسلامی کے اعجاز اعوان ، تحریک انصاف جدہ کے احمد بشیر، پی پی پی کے چیف آرگنائزر تصور چودھری، بزنس کمیونٹی کے چیئرمین چوہدری محمد افضل جٹ، جٹ انٹرنیشنل فیڈریشن کے چیئرمین خالد چاہل، عوامی نیشنل پارٹی کے نوشیرواں خٹک، مسلم لیگ ن کے انصر گھمن، کشمیر کمیٹی کے رکن راجہ زریں نے بھی خطاب کیا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ