قومی اسپورٹس میلہ کل سے پشاور میں شروع ہوگا‘تیاریاں مکمل

20

پشاور(نمائندہ جسارت )محکمہ یوتھ افیئرز خیبر پختونخوا کے زیر اہتمام ملکی سطح پرکل سے شرو ع ہونیوالا 4 روزہ نوجوانوں کے سب سے بڑے اسپورٹس میلے کے انعقاد کیلیے تمام انتظامات زور وشور سے جاری ہے، قیوم اسپورٹس کمپلیکس میں نیشنل یوتھ کارنیوال کے نام سے منعقد ہ میلے میں ملک بھر کے 200 کے قریب تعلیمی اداروں کے 30000ہزار کے قریب نوجوانوں نے شمولیت کرکے دلچسپی ظاہرکی تھی جس میں فائنل راؤنڈ کیلیے کوالیفائی کرنے والے 2ہزار کے قریب نوجوان آخری مقابلوں میں حصہ لینے کیلیے پشاور پہنچ رہے ہیں،اس وقت خیبرپختونخوا کی سطح پر 600 نوجوان جبکہ ملک کے دیگر صوبوں سے کوالیفائی کرنے والے 1500نوجوان جس میں خواتین اورمرد شامل ہیں پشاور کا رخ کررہے ہیں، میلے کی تیاریوں کے حوالے سے گزشتہ روز سیکرٹری اسپورٹس ،کلچراینڈ یوتھ افیئرز محمد طارق خان نے قیوم اسپورٹس کمپلیکس کا دورہ کیا اورانہوں نے نیشنل یوتھ کارنیوال کے انعقاد کا جائزہ لیا۔ اس موقع پر ان کے ہمراہ ڈائریکٹر جنرل اسپورٹس جنیدخان ، ڈائریکٹر جنرل یوتھ افیئرز اسفندیار خان خٹک کے علاوہ دیگراعلیٰ حکام بھی موجو د تھے۔تیاریوں کا جائزہ لینے کے بعد ڈائریکٹر یوتھ افیئرز اسفند یار خان خٹک نے سیکرٹری کو نیشنل یوتھ کارنیوال کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی ۔نیشنل یوتھ کارنیوال جو 4 روز تک جاری رہے گا، جس میں ملک بھر سے طلباء و طالبات شرکت کرنے کیلیے پشاورپہنچ رہے ہیں ، نوجوانوں کے اس میلے میں 30 مختلف مقابلوں بھی شامل کیے گئے ہیں ، جس میں ذہنی آزمائش، بیت بازی،نعت خوانی، گائیکی،اسنوکر ، پینٹنگ،مضمون نویسی ، شترنج،ڈرامہ ، خوشخطی اور دیگر مقابلے شامل ہیں ،اس سلسلے میں رضاکاروں کی خدمات بھی حاصل کی گئی ہے جبکہ قیوم اسپورٹس کمپلیکس کو چاروں طرف سے سخت سیکورٹی کے انتظامات بھی کرلیے گئے ہیں ،واضح رہے کہ صوبائی حکومت نے نوجوان کے اس میلے کو کامیاب بنانے کیلیے قومی احتساب بیورو خیبرپختونخوا اور لائیزان کارپوریشن نامی کنسلٹنٹ فرم کی خدمات بھی حاصل کی گئی ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ