نظام کو کوئی خطرہ نہیں،بلاول بھٹو زرداری

219

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ نظام کو کوئی خطرہ نہیں، یہ لڑائی تخت رائے ونڈ کی لڑائی ہے، ہم میثاق جمہوریت کے بنیادی اصولوں پر آج بھی قائم ہیں۔

کاغان میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے بلاول بھٹو نے کہا کہ چترال اور مانسہرہ میں کامیاب جلسہ ہوا۔ ہم میثاق جمہوریت کے بنیادی اصولوں پر آج بھی قائم ہیں۔ (ن) لیگ نے ہمارے دور حکومت میں میثاق جمہوریت کا ساتھ نہیں دیا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کے رویے پر پارلیمنٹ میں بحث ہونی چاہئے۔ نظام کو کوئی خطرہ نہیں ہے۔ یہ لڑائی تخت رائے ونڈ کی لڑائی ہے۔ مسلم لیگ (ن) نے ہمیں دھوکہ دیا ۔ بلاول بھٹو نے کہا کہ عمران خان کو سندھ میں ویلکم کرتے ہیں انہیں ضرور آنا چاہئے۔ عمران خان کے قول و فعل میں تضاد ہے۔

انہوں نے کہا کہ الیکشن وقت پر ہوں گے۔ سندھ میں ایک ہی وزیراعلیٰ کو کرپشن کے الزام میں نکالا گیا جواب عمران خان کے ساتھ ہے۔ میری دعا ہے عمران خان کا جلسہ کامیاب ہو۔ بلاول بھٹو نے کہا کہ سب کو سپریم کورٹ کا فیصلہ تسلیم کرنا چاہئے نواز شریف پر تقریر میں توہین عدالت کررہے ہیں۔ قانون سب کے لئے ملک جیسا ہونا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ 2013 کے انتخابات میں ہمیں اوپن گراؤنڈ نہیں ملا تھا۔ دیگر سیاسی جماعتوں کو انتخابی مہم کا موقع ملا۔ انہوں نے کہا کہ پی ایس ایف کے کارکن کو پنجاب پولیس نے مارا ہے میں اس کی مذمت کرتا ہوں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ