سپریم جوڈیشل کونسل میں جسٹس فرخ عرفان کیخلاف ریفرنس کی سماعت 

193
اسلام آباد: چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ کی زیرصدارت نیشنل جوڈیشل پالیسی کمیٹی کا اجلاس ہورہا ہے
اسلام آباد: چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ کی زیرصدارت نیشنل جوڈیشل پالیسی کمیٹی کا اجلاس ہورہا ہے

اسلام آباد (آن لائن) سپریم جوڈیشل کونسل نے جسٹس فرخ عرفان کے خلاف ریفرنس کی سماعت کے دوران جسٹس فرخ عرفان کو گو اہ پیش کرنے کے لیے ایک اور موقع دے دیا ہے۔ ریفرنس کی سماعت چےئرمین سپریم جوڈیشل کونسل چیف جسٹس آصف سعید خان کھوسہ کی سربراہی میں 5 رکنی کونسل نے کی۔ اس موقع پر چیف جسٹس کا فرخ عرفان کی طرف سے التواء کی درخواست پر ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے ریمارکس دیے کہ آئندہ سماعت پر گواہ پیش نہ ہوئے تو صرف فرخ عرفان کا بیان قلمبند ہوگا۔ بیان قلمبند کرنے کے بعد شہادتیں کلوز کردیں گے۔ یہ مقدمہ 3 سال سے التواء کا شکار ہے۔ جسٹس فرخ عرفان کے وکیل حامد خان نے اس موقع پر کونسل کو بتایا کہ مقدمے کے گواہ سنجیو کمار پیٹل دبئی میں ہیں۔ دیگر گواہان اسیب رحمن بھٹی اور سید مبشر علی لندن میں ہیں۔ یہ تمام گواہان فضائی روٹ بند ہونے کی وجہ سے پاکستان نہیں آسکے ۔ گواہ پیش کرنے کے لیے ایک ماہ کا وقت دیاجائے۔ چیف جسٹس نے کہا کہ آخری موقع دے رہے ہیں وعدہ کریں اگلی سماعت پر گواہان کا ضرور پیش کریں گے۔ ریفرنس کی سماعت 18اپریل دن 2 بجے تککے لیے ملتوی کردی گئی ہے۔