سی پیک پرنظر ثانی کے بعد منصوبے کو وسعت دینے پر اتفاق ہوا ہے ‘چینی سفیر

58

کوئٹہ(نمائندہ جسارت)پاکستان میں متعین چینی سفیر یاؤ جنگ کا کہنا ہے کہ پاکستان کی نئی حکومت نے سی پیک معاہدے پر نظر ثانی کی ہے اور راہداری منصوبے کو مزید وسعت دینے اور زیادہ تیزی سے کام کرنے پر اتفاق کیا ہے ۔ اگلے مرحلے میں مشترکہ اور سماجی اقتصادی منصوبوں پر توجہ دینے ، بلوچستان اور خیبر پشتونخوا کو زیادہ وسائل اور منصوبے دینے کا فیصلہ ہوا ہے ۔ سی پیک معاہدہ ایک باقاعدہ فریم ورک کے تحت ہوا ہے جس میں یہ اصول طے ہے کہ ہر فیصلہ باہمی مشاورت سے کیا جائیگا۔ راہداری منصوبے میں سعودی عرب سمیت سرمایہ کاری کے خواہشمند کسی ملک یا کمپنی کی شمولیت پر اعتراض نہیں، انہیں
راہداری منصوبے میں شمولیت پر خوش آمدید کہا جائیگا۔وزیر اعلیٰ بلوچستان کی تجویز پر کوئٹہ میں سماجی اقتصادی سینٹر قائم کیا جائیگا۔یہ بات انہوں نے کوئٹہ کے2 روزہ دورہ کے اختتام پر پریس کلب کوئٹہ میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ اس موقع پر کراچی میں متعین سندھ اور بلوچستان کیلیے چین کے قونصل جنرل وانگ یو، گوادر پورٹ اورحبکو اورسینڈک سمیت بلوچستان میں مختلف منصوبوں پر کام کرنیوالی چینی کمپنیوں کے حکام بھی موجود تھے۔ چینی سفیر یاؤ جنگ نے کہا کہ سی پیک معاہدہ ایک باقاعدہ فریم ورک کے تحت ہوا ہے اور یہ دونوں حکومتوں کی ویب سائٹ پر موجود ہے کوئی بھی وہاں جاکر اس کا جائزہ لے سکتا ہے۔ نئی حکومت نے بھی اس کا جائزہ لیا ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ