حکومت پنجاب تجاوزات کیخلاف مستقل پالیسی بنائے‘ لیاقت بلوچ

65

لاہور(نمائندہ جسارت) جماعت اسلامی پاکستان کے سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے حکومت پنجاب کی جانب سے تجاوزات کے خاتمے اور قبضہ گروپوں سے سرکاری و نجی اراضی بازیاب کرانے کے حوالے سے آپریشن کلین اپ کرنے پر اپنے ردعمل میں کہاہے کہ حکومت یکسوئی کے ساتھ مستقل بنیادوں پر قبضہ ختم کرنے کے لیے پروگرام ترتیب دے ۔ ماضی کی حکومتوں نے تجاوزات اور قبضہ گروپوں کے خلاف کارروائی کا آغاز کیا لیکن کچھ عرصے بعد حکومت اور انتظامیہ کی جانب سے خاموشی پر انہی عناصر نے پھر تجاوزات قائم کرلیں ۔ انہوں نے کہاکہ تجاوزات نے شہروں کا حسن تباہ و برباد کر کے رکھ دیاہے ۔ حکومت مستقل طور پر ایسا میکنزم ترتیب دے کہ آئند کسی کو تجاوزات قائم کرنے کی جرأت نہ ہو ۔ انہوں نے کہاکہ ٹریفک پولیس کی جانب سے ٹریفک کی خلاف ورزی پر چالان کرنے کے ساتھ شہریوں اور صحافتی برادری کے ساتھ ناروا سلوک اور تشدد کے واقعات سامنے آرہے ہیں جو ناقابل فہم بات ہے ۔ چالان کی رقم اتنی زیادہ رکھی گئی ہے کہ موٹر سائیکل سوار اور گاڑیوں والے چیخ اٹھے ہیں ۔ حکومت ہوش کے ناخن لیے اور عوام کو بہانے بہانے سے لوٹنے کی پالیسی واپس لے۔ ٹریفک پولیس کے ذمے داران کو چاہیے کہ وہ شہریوں سے ناروا سلوک کا سخت نوٹس لیں اور قانون کی پاسداری پر عمل درآمد کرانے پر توجہ مرکوز کرائیں ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ