سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے ملازمین کی علامتی بھوک ہڑتال

47
حیدر آباد : سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے ملازمین جبری برطرفیوں کیخلاف علامتی بھوک ہڑتال پر بیٹھے ہیں
حیدر آباد : سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے ملازمین جبری برطرفیوں کیخلاف علامتی بھوک ہڑتال پر بیٹھے ہیں

حیدر آباد (اسٹاف رپورٹر) سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی حیدرآباد ریجن کے کنٹر یکٹ ،ڈیلی ویجز اور ورک چارج ملازمین کی جانب سے جبری برطرفیوں اور تنخواہوں کی عدم ادائیگی کیخلاف ٹھنڈی سڑک پر واقع سوک سینٹر کے سامنے تیسرے روز بھی علامتی بھوک ہڑتال کی گئی۔ اس موقع پر گڈو قنبرانی، ایاز جونیجو، اعجاز کھوسہ، ضیا قاضی، آفتاب محفوظ زئی ودیگر نے احتجاجی مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ماہ رمضان المبارک جیسے مقدس مہینے میں ہمیں بے روزگار کرکے عید کے دن بھی ہمیں اور ہمارے بچوں کو فاقہ کشی میں مبتلا کیا گیا ہے اور گزشتہ کئی ماہ سے احتجاج کرنے کے باوجود ابتک ہمارے جائز مسائل نہیں کیے گئے ہیں اور ہمیں انتہائی قدم اٹھانے پر مجبور کیا جارہا ہے۔ انہوں نے وزیر اعلیٰ سندھ سید مر اد علی شاہ، وزیر بلدیات سعید غنی اور حکام سے مطالبہ کیا کہ ہماری زندگی کے 15 سے 20 سال اس ادارے میں نوکریاں کرتے ہوئے گزر گئے، خدارا ہمارا اور ہمارے بچوں کا خیال کیا جائے اور ہمیں فاقہ کشی سے بچایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ اگر تین روز میں ہمیں بحال نہ کیا گیا تو ہم تادم مرگ بھوک ہڑتال کرنے پر مجبور ہوں گے۔