چینی اثرورسوخ سے خائف مغربی انٹیلی جنس اداروں نے اتحاد بنالیا

78

برلن (اے پی پی) چین کے بڑھتی ہوئی اقتصادی قوت اور اثرو رسوخ سے خائف ہو کر دنیا کے 5 بڑے انٹلیجنس اداروں نے اتحاد کر لیا، ان اداروں نے چین کی ہم خیال ممالک میں ہونے والی سفارتی و تجارتی سرگرمیوں اور سرمایہ کاری کے بارے میں حساس معلومات کے تبادلوں کا آغاز رواں سال کی ابتداء میں کر دیا تھا، جن ممالک کی انٹلیجنس اداروں نے چین پر گہری نظر کے لیے’’ فائیو آئیزالائنس‘‘ قائم کیا ہے ان میں امریکا، برطانیہ، آسٹریلیا، نیوزی لینڈ اور کینیڈا شامل ہیں جبکہ جرمنی اور جاپان بھی
اپنے انٹلیجنس اداروں کو اس الائنس میں شامل کرنے کے لیے پر تول رہے ہیں اگر یہ دونوں ممالک بھی شامل ہو جاتے ہیں تو اس اتحاد کا نام ’’سیون آئیز الائنس‘‘ہو جائے گا۔اس بات کا انکشاف ایک برطانوی ادارہ ابلاغ نے متعلقہ ممالک کے ساتھ متعلقہ حکام کے حوالے سے اپنی ایک خصوصی رپورٹ میں کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ یہ الائنس چین کے ساتھ ساتھ روس کی بعض سرگرمیوں کا بھی جائزہ لے رہا ہے۔ ایک امریکی اہلکار نے اپنا نام خفیہ رکھتے ہوئے بتایا کہ چین کی عالمی حکمت عملی کے جواب کے لیے شراکت دار اتحادی آپس میں تبادلہ خیال کرتے ہیں کیونکہ چین کی عالمی حکمت عملی مؤثر تر ہوتے ہوئے تیزی پکڑ رہی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ صدر ٹرمپ کی جانب سے چین کیخلاف سیاسی فرنٹ پر اکیلے کھڑے ہونے کے باوجود ان کی انتظامیہ در پردہ دوسرے ہم خیال ملکوں کے ساتھ چین کے خلاف گہرائی سے کام میں مصروف ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.