***۔۔۔۔۔۔ گوادر ۔۔۔۔۔۔***

119

گوادر، پاکستان انجینئرنگ کونسل کے
زیر اہتمام توانائی بحران کے موقع پر ورکشاپ
گوادر (نمائندہ جسارت) پاکستان انجینئرنگ کونسل کے زیر اہتمام توانائی بحران، حل کے اقدامات اور معیار کے موضوع پر ایک روزہ ورکشاپ کا جی ڈی اے آ ڈیٹوریم گوادر میں انعقاد کیا گیا۔ ورکشا پ میں توانائی بحران کے حوالے سے مختلف موضوعات پر لیکچر سیشن میں مقررین نے توانائی بحران سے نمٹنے اور اس کے حل سمیت آئندہ کی حکمت عملی کے حوالے سے شرکا کو آگاہی فراہم کی۔ ورکشاپ سے وائس چےئرمین پی ای سی بلوچستان قاضی رشید اور ڈپٹی چےئرمین پاکستان انجینئرنگ کونسل اسلام آباد انجینئر عبدالرحمن نے شر کا کو آگاہی فراہم کی۔
ٹریفک حادثے میں ایک ہی
خاندان کے دو افراد جاں بحق
ٹریفک حادثے میں ایک ہی خاندان کے دو افراد جاں بحق۔ جاں بحق ہونے والے سگے بھائی اور بہن تھے۔ ایک ہی گھر سے دو جنازے اٹھنے پر کہرام مچ گیا۔ حادثہ روڈ پر مال بردار گاری پا ر ک کر نے کی وجہ سے پیش آیا۔ واقعات کے مطابق گزشتہ شب سید ہاشمی ایو نیو گوادر میں روڑ حادثہ میں ایک ہی خاندان کے دو افراد جاں بحق ہوگئے ہیں یہ واقع قند یل چو ک پر پیش آیا ہے۔ جاں بحق ہونے والے آپس میں سگے بھائی اور بہن تھے جو موٹر سائیکل پر بازار کی طرف جارہے تھے کہ اند ھیر میں روڑ پر کھڑ ے مال بر دار گاڑیوں سے ٹکرا گئے۔ یہ گاڑیاں گزشتہ کئی روز سے روڈ پر کھڑ ی تھیں جن پر چائنیز کمپنی کی تعمیراتی گاڑیاں لدی ہوئی تھیں لیکن ٹریفک پو لیس یا کسی دوسرے متعلقہ ادارے نے عام ان مال بردار گاڑیوں کا نوٹس نہیں لیا اور نہ ہی گاڑیوں کے کھڑے رہنے کی صورت میں ایسی چیز کا استعمال کیا گیا تھا کہ جس سے دیگر ٹر یفک کو روڈ بند ہونے کاپتا چلتا تھا۔ تاہم ا س مبینہ غفلت کی وجہ سے دو قیمتی جا نیں ضائع ہوگئیں اور ایک ہی گھر سے دو جنازے اٹھنے پر کہرام مچ گیا ۔ جاں بحق بہن بھائی کاتعلق دشت ضلع کیچ سے تھا جو گوادر میں رہائش پذ یر تھے جنکی تدفین گوادر میں کی گئی۔ تاہم اب تک یہ معلو م نہیں ہوسکا کہ پو لیس نے اس حادثے کی رپورٹ کن دفعات کے تحت درج کی ہے اور کس کو اس کاذمے دار ٹھہر ایا گیا ہے۔
دارالعلوم سیکنڈری پبلک اسکول میں
یوم والدین اور تقریب تقسیم انعامات
ترقی کے لیے تعلیم ہی بنیادی عنصر ہے۔ علم کے ہتھیار سے لیس ہوئے بغیر ترقی ممکن نہیں۔ گوادر کے طلبہ میں ٹیلنٹ کی کوئی کمی نہیں۔ انہیں تو بس مواقع چاہیے۔ مستقبل کے چیلنجز کا مقابلہ کرنے کے لیے والدین اپنے بچوں کو عصر حاضر کے تقاضوں سے ہم آہنگ علوم دلوائیں۔ دارالعلوم سیکنڈری پبلک اسکول میں یوم والدین اور تقریب تقسیم انعامات کے موقع پر مقررین کا خطاب ۔ طلبہ و طالبات نے تقاریر، نعت، نظم، ملی نغمیں، خاکے اور ٹیبلوز پیش کرکے اپنے کارکردگی سے شرکا سے داد تحسین حاصل کی۔ بہترین کارکردگی پر طلبا میں انعامات تقسیم۔ دارالعلوم سیکنڈری پبلک اسکول گوادر میں یوم والدین اور تقریب تقسیم انعامات کا انعقاد کیا گیا۔ تقریب کے مہمان خاص ڈسٹرکٹ کونسل کے چیئرمین بابو گلاب، ضلعی تعلیمی آفیسر عبدالوہاب مجید، میونسپل کمیٹی کے چیئرمین عابد رحیم سہرابی اور جماعت اسلامی بلوچستان کے جنرل سیکرٹری مولانا ہدایت الرحمن تھے۔ تقریب کا آغاز تلاوت کلام پاک سے کیا گیا۔ تقریب سے طلبہ نے مختلف موضوعات پر تقاریر، نعت ، ملی نغمے، نظم، خاکے اور ٹیبلوز پیش کرکے اپنی بہترین پرفارمنس پر شرکا سے داد تحسین حاصل کی۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ضلع کونسل کے چیئرمین بابو گلاب، اسکول کے پرنسپل مولانا محمد قاسم صابر، میونسپل کمیٹی گوادر کے چیئرمین عابد رحیم سہرابی، ضلعی تعلیمی آفیسر عبدالوہاب مجید، جماعت اسلامی بلوچستان کے جنرل سیکرٹری جنرل مولانا ہدایت الرحمن، جمیل یار و دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ترقی کے لیے تعلیم ہی بنیادی عنصر ہے۔ علم کے ہتھیار سے لیس ہوئے بغیر ترقی ممکن نہیں۔ انھوں نے کہا کہ گوادر کے طلبہ میں ٹیلنٹ کی کوئی کمی نہیں انہیں بس مواقع ملنے کی دیر ہے۔ انہوں نے کہا کہ گوادر کی تیز رفتار ترقی اور مستقبل کے چیلنجز کا مقابلہ کرنے کے لیے والدین اپنے بچوں کو عصر حاضر کے تقاضوں سے ہم آہنگ علوم کی زیور سے روشناس کرائیں۔ انہوں نے کہا کہ گوادر میں تعلیم کی ترقی و ترویج کے لیے دارالعلوم کا کردار قابل تحسین ہے۔ جہاں پر دینی اور عصری تقاضوں سے ہم آہنگ علوم دی جارہی ہے اور یہ ایک فلاحی ادارہ بھی ہے۔ ہمیں ایسے اداروں کی سرپرستی اور ہر طرح کی تعاون کے لیے ہمہ وقت تیار رہنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ انسان علم کے بغیر نا مکمل ہے ہمیں اپنے بچوں کی تعلیم پر سرمایہ کاری کرنی چاہیے۔ تاکہ ہم مستقبل میں ایک باشعور اور تعلیم یافتہ نسل تیار کر سکیں۔ دریں اثنا طلبہ و طالبات کو بہترین کارکردگی پر شیلڈ اور انعامات دیے گئے۔ ڈسٹرکٹ کونسل کے چیئرمین بابو گلاب نے اپنی طرف سے طلبہ کے لیے 30 ہزار جبکہ میونسپل کمیٹی کے چیئرمین عابد رحیم سہرابی نے 20 ہزار روپے اعلان کیا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ