بااثر افراد کے ظلم سے نجات دلائی جائے، سکرنڈ کے رہائشیوں کا مطالبہ

26

نواب شاہ (سٹی رپورٹر) تعلقہ سکرنڈ کے گاؤں لدھو چانڈیو کے محنت کش علی خان چانڈیو نے اپنی والدہ بھرائی چانڈیو، بہن حلیمہ چانڈیو اور بیٹی شمیم چانڈیو نے سکرنڈ پولیس اور بااثر افراد پنہوں چانڈیو، بدر چانڈیو، عبدالواحد چانڈیو، سوزل چانڈیو، سلیم چانڈیو اور دیگر کیخلاف احتجاج کرتے ہوئے مسمات حلیمہ چانڈیو نے بتایا کہ ملزم پنہوں چانڈیو مجھے پر دباؤ ڈال رہا ہے کہ میں اپنے شوہر منظور چانڈیو کو زہر دے دوں۔ اس نے کہا کہ پنہوں چانڈیو میری شادی بدر چانڈیو سے کرنا چاہتا ہے۔ میں اپنے شوہر کے ساتھ گھریلو زندگی خوشگوار گزار رہی ہوں، مجھے دھمکیاں دینے والوں سے جان کا خطرہ ہے۔ مسمات بھرائی چانڈیو نے کہا کہ 6 سال قبل جوابدار پنہوں چانڈیو، بدر چانڈیو اور دیگر نے میرے جسم پر گرم پانی ڈال کر مارنے کی کوشش کی تھی۔ گرم پانی سے جھلسنے کے بعد معذوری کی زندگی گزارنے پر مجبور ہوں لیکن بااثر افراد کیخلاف میرا کیس داخل نہیں کیا جارہا۔ ان کا کہنا تھا کہ سکرنڈ پولیس نے گزشتہ رات بااثر افراد سے پیسے لے کر ہمارے گھر میں گھس ہم پر تشدد کیا۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ ہمیں سکرنڈ پولیس اور بااثر افراد کے ظلم سے نجات دلائی جائے۔