کابلی ٹائرز انسانی زندگیوں کے لیے خطرے کا باعث

43

کراچی (اسٹاف رپورٹر )مقامی ٹائر انڈسٹری کے حلقوں نے ملک میں فروخت کیے جانے والے کابلی ٹائروں کو انسانی زندگیوں کے لیے باعث خطرہ قرار دیا ہے۔کابلی ٹائروں کی اسمگلنگ کے حوالے سے مقامی مینوفیکچرر نے کہا کہ یہ پرانے ٹائر مارکیٹ میں بڑی تعداد میں فروخت کیے جارہے ہیں اور اس کا ایک بڑا ذریعہ افغان ٹرانزٹ ٹریڈ ہے۔ حکومت کو چاہیے کہ ان کی روک تھام کے لیے افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کے امپورٹ ڈیٹا کی جانچ پڑتال کو سخت بنائے تاکہ یہ معلوم کیا جاسکے کہ افغان امپورٹ کے جانے والے ٹائر وہاں کی آبادی اور مارکیٹ کی درست ترجمانی کرتے ہیں یا نہیں۔ افغان ٹرانزٹ کے ذریعے ٹائر اسمگل کرکے کراچی اور دیگر ملک کے حصوں میں منتقل کردیے جاتے ہیں۔ کسٹمز حکام کو چاہیے کہ وہ اس سہولت کے غلط استعمال کو روکیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.