نماز پڑھنے پر ملازمت سے نکالنے والی امریکی کمپنی پر ہرجانہ

49

واشنگٹن (انٹرنیشنل ڈیسک) امریکا میں گوشت کی پیکنگ اور سپلائی کرنے والی مقامی کمپنی نے نماز کی وجہ سے ملازمت سے برطرف کیے گئے صومالیہ کے 138 ملازمین کو ڈیڑھ کروڑ ڈالر کی رقم ہرجانے کے طور پر ادا کرنے پر آمادگی ظاہر کر دی ہے۔ عرب ٹی وی کے مطابق امریکی ریاست کولو راڈو میں قائم ’کارگل میٹ سلوشنز‘ نامی کمپنی نے کچھ عرصہ قبل مسلمان ملازمین کو نماز کے لیے کام کے اوقات سے رخصت دینے کی درخواست مسترد کر دی تھی اور دوران ڈیوٹی نماز ادا کرنے والے 138 صومالی ملازمین کو نکال دیا تھا۔ امریکا میں ملازمین کے حقوق کے لیے قائم کردہ تنظیم کی جانب سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ کمپنی نے نہ صرف نکالے گئے ملازمین کو ہرجانے کے طور پر ایک کروڑ پچاس لاکھ ڈالر کی رقم ادا کرے گی بلکہ وہ مسلمان ملازمین کے لیے نماز کے اوقات میں انہیں وقفہ مہیا کرے گی۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ