ایون فیلڈ پراپرٹی کیس میں شریف خاندان کا قانونی مشیر طلب 

72

اسلام آباد(آن لائن) اسلام آباد ہائی کورٹ نے ایون فیلڈ پراپرٹی کیس میں شریف خاندان کے قانونی مشیر کوآج دلائل کے لیے طلب کرلیا ۔جسٹس اطہر من اللہ اور جسٹس میاں گل حسن اورنگزیب پر مشتمل ڈویزنل بینچ نے درخوستوں پر سماعت کی ۔فاضل عدالت نے کہا کہ سزا معطلی کی درخواستیں ایک ماہ کے لیے نہیں سنی جاسکتیں، خواجہ حارث خواجہ حارث میرٹ پر بات کیے بغیر عدالت کو مطمئن کریں ۔بینچ میں شامل فاضل جج اطہر من اللہ نے ریمارکس دیے کہ فریقین اپنے تحریری جواب بھی عدالت میں جمع کرائیں۔دوران سماعت نیب پراسیکیوٹر اکرم قریشی عدالت میں پیش ہوئے اور استدعا کی کہ ایک ہفتے کے لیے سماعت ملتوی کی جائے جس پر فاضل جج میاں گل حسن اورنگزیب نے ریمارکس دیے اس سے آپ کے ادارے کا نام جائے گا ۔ عدالت نے ہدایت کی آئندہ اگر
پراسیکیوشن نے التوا مانگا تو ہم فیصلہ دے دیں گے ۔علاوہ ازیں احتساب عدالت اسلام آباد میں نوازشریف کے خلاف العزیزیہ اور اسٹیل مل ریفرنسزکی سماعت جج ارشد ملک نے کی ۔کیس کے مرکزی گواہ اور پانامہ جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیا پر وکیل صفائی خواجہ حارث کی جرح جاری جاری رکھی سابق وزیر اعظم نواز شریف کو کو 12ویں بار سخت سیکورٹی میں اڈیالہ جیل سے احتساب عدالت پیش کیا گیا۔جج ارشد ملک کمرہ عدالت مین چیونگم چبانے پر ن لیگ کے سینیٹر مشاہد حسین سید پر برہم ہوگئے ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ