برلن میں جشن آزادی پاکستان کی تقریب

69

مطیع اللہ
پاکستان قونصلیٹ برلن کے زیر اہتمام ماہ ا?زادی کے آغاز پر جشن ازادی تقریب کا اہتمام کیا گیا جس میں برلن سمیت دیگر قریب وجوار کے اضلاع سے پاکستانی کمیونٹی نے بھر پور شرکت کی تقریب کے آغاز پر سفیر پاکستان جوہر سلیم نے خطاب کے آغاز پر تمام پاکستانیوں کو جشن آزادی کی مبارکباد پیش کرتے ہوئے پرجوش انداز میں کہا کہ تبدیلی آ نہیں رہی بلکہ تبدیلی آگئی ہے نوجوان آگے آرہیے ہیں ملک میں تبدیلی آرہی ہے انہوں نے کہا کہ ہم بھی بیرون ملک رہتے ھوئے پاکستانی ثقافت کے فروغ کیلیے اپنی کوششیں کررہے ہیںتاکہ پاکستان کا مثبت امیج یورپ میں محسوس کیا جائے انہوں نے کہا کہ گزشتہ روز ہمبرگ میں پاکستان نیوی کا بحری جہاز لنگر انداز ہوا دنیا بھر نے دیکھا پاکستانی کمیونٹی نے بھی دورہ کیا اس موقع پر بھی ہم نے پاکستان کی آ?زادی کے مناسبت سے ایک کنسرٹ کیا جس میں پاکستانیوں نے بھرپور شرکت کی ہم چاہتے ہیںپاکستان کی ثقافت و سیاحت سے دنیا کو آشناکرسکیں پاکستان ایک سیاحتی ملک ہے جہاں دنیا سے بہتر سیاحتی مقامات موجود ہیں انہوں نے کہا کہ پاکستانی ہر میدان میں اپنا لوہا منواتے تقریب کے شرکاء میں پاکستانی اسٹوڈنٹس نے بھر پور شرکت کی پاکستانی اسٹوڈنٹ کے فعال تنظیم بزم برلن آرگنائریشن، منہاج القران برلن کے امیر میاں عمران الحق، مسلم لیگ نواز کے سرکردہ رہنما اور کشمیر کمیٹی ممبر انصربٹ،پاکستان پیپلزپارٹی کے بانی رکن اور برلن کے سینئرصحافی ظہوراحمد ، معروف شخصیت ریاض احمد شیخ، پاکستانی قونصلیٹ ورکرز اور پاکستانی کمیونٹی نے بھر پور شرکت کی۔تقریب کا آغاز پاکستانی قومی ترانہ سے کیا گیا شرکاء نے قومی ترانے کے احترام میں کھڑے ہوکر پر جوش انداز میں نعرے لگائے ،پاکستانی سفیر کے خطاب کے بعد پاکستان کے معروف گلوکار فاخر پنجابی، پشتو، سندھی اور بلوچی گانوں سمیت پاکستان مشہور نغمہ دل دل پاکستان گاکر شرکاء سے داد وصول کی فاخر کے مختلف گانوں پر اسٹوڈنٹس نے خوب جوش کا مظاہرہ کیا ۔ پاکستانی نوجوان جوشیلے انداز میں پاکستانی گانوں پر رقص کرنے مگن رہے معروف گلوکار فاخر نے پنچابی،سندھی بابا جمالو، پشتو جانان، بلوچی وچاتکے، سمیت عطاء نیازی کا گانابھی گایا بعدازیں گلوکار فاخر نے کیمونٹی سے تعارفی خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان قونصلیٹ اپنے شہریوں کے ساتھ مل کراچھے کام کررہا ہے جس کی مثال آج کا یہ پروگرام ہے انہوں نے کہا کہ برلن شہر میں پاکستانیوں کی تعداد انتہائی کم ہے لیکن اج کی حاضری نے مجھ سمیت سب کے دل جیت لیے ہیںتقریب کے اختتام پر شرکاء کے لیے پاکستانی کھانوں کا اہتمام کیا گیا تقریب کے شرکاء نے معروف گلوکار کو اپنے درمیان پاکر پاکستانی سفیر کا شکریہ اداکیا اور سلیفیاں بنواتے رہیے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ