ملک کی معاشی آزادی سلب ہوگئی ،عتیق میر

144

کراچی(اسٹاف رپورٹر)ملک کی ترقی اور خوشحالی سودی مالیاتی نظام کے دلدل میں دھنس رہی ہے، ملک مکمل طور پر سود خور مالیاتی اداروں کے چنگل میں پھنس گیا ہے، ملک کی معاشی آزادی سلب ہوگئی حکمران آئی ایم ایف کے غلام بن گئے ہیں، موجودہ حکمران عوام کو مہنگائی کے بوجھ سے نجات دلانے آئے تھے اب خود بوجھ بن گئے ہیں، ان خیالات کا اظہار آل کراچی تاجر اتحاد اور عتیق میر فائونڈیشن کے چیئرمین عتیق میر نے معین اسٹیل مارکیٹ مرچنٹس ایسوسی ایشن کے دفتر میں ایک اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا جس میں نومنتخب باڈی کے عہدیداران چیئرمین محمد یونس، صدر محمد قاسم، نائب صدر محمد افضل ہاشمی، جنرل سیکرٹری محمد ہارون، جوائنٹ سیکرٹری محمد شاہد، فنانس سیکرٹری محمد فیصل انفارمیشن سیکرٹری محمد بلال اور دیگر موجود تھے،عتیق میر نے کہا کہ ایک جانب حکومت اور دوسری جانب مصنوعی مہنگائی کے بم گرانے والے طاقتور مافیاز نے عوام کی زندگی اجیرن کردی ہے، حکومت اور اسکے ادارے ذخیرہ اندوزوں اور ناجائز منافع خوروں کے ہاتھوں مکمل طور پر بے بس ہوچکے ہیں۔