شیل نے ایلو مینیم سے تیار کردہ ٹینک لاریاں متعارف کرادیں

43

کراچی (اسٹاف رپورٹر)شیل پاکستان لمٹیڈ انڈسٹری میں معیارات کو بہتر بنانے ، بالخصوص پاکستان میں ،انرجی انڈسٹری میں جدت متعارف کرانے اور بنچ مارک قائم کرنے کے لیے وقف ہے۔شیل پاکستان نے حال ہی میں ، ایندھن کی تقسیم کے لیے مخصوص اپنے فلیٹ میں ایلو مینیم سے تیار کردہ ٹینک لاریاں متعارف کرائی ہیں جن سے شیل کے کسٹمرز تک روڈ نیٹ ورک بھی بہتر ہو گا۔ایلومینیم سے تیار کردہ اِن نئی ٹینک لاریوں سے زیادہ بڑی مقدار میں پروڈکٹ کی ترسیل ممکن ہو سکے گی اور نیشنل ہائی وے اتھارٹی کی جانب سے ایکسل لوڈ کے لیے مقرر کردہ پیرا میٹرز کی بنیاد پر، اسٹیل سے تیار کردہ ٹینک لاریوں کے مقابلے میں زیادہ بہترکارکردگی کارکردگی کا مظاہرہ کریں گی۔نئی ٹینک لاریوں سے انڈسٹری ، ماحول ا ور مجموعی طور پر ملک کو متعدد دیگر فوائد بھی حاصل ہوں گے۔اس سے قبل زیر استعمال اسٹیل کی ٹینک لاریوں کے مقابلے میں، ایلومینیم سے تیار کردہ ٹینک لاریاں کم وزن ہوتی ہیں جو پاکستانی سڑکوں کے لیے زیادہ بہتر ہے۔اس میٹریل میں زنگ نہیں لگتا ہے اور اسٹیٹک چارج ( static charge) بھی نھیں بنتا ہے اور اس طرح تحفظ اورسلامتی میں اضافہ ہوتا ہے۔ایلومینیم سے تیار کردہ ٹینک لاریوں پر دیکھ بھال کے اخراجات بھی کم ہوتے ہیں اور فیول اکنامی میں اضافہ ہوتا ہے اور ماحول بھی کم متاثر ہوتا ہے۔ایلومینیم سے تیار کردہ نئی ٹینک لاریوں کا افتتاح وفاقی وزیر بحری اْمور، علی زیدی نے کیا۔افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے شیل پاکستان لمٹیڈ کے منیجنگ ڈائریکٹر ، ہارون رشید نے کہا کہ ملک میں انرجی کا سب سے پرانا کثیر القومی ادارہ ہونے کی حیثیت سے ، بین الاقوامی مصنوعات اور معیارات متعارف کرانے اور پاکستانی مارکیٹ میں مقامی مہارت کو ترقی دینے میں ہم ہمیشہ پیش پیش رہے ہیں۔شیل کو ملک بھر میں ایندھن کی ترسیل زیادہ محفوظ اور عمدہ بنانے کے لیے اپنا کردار ادا کرنے پر فخر ہے۔ ہم آئندہ بھی لوگوں اور ماحول کے تحفظ کے ساتھ نئی جدتوں اور زیادہ محفوظ پروسیسز کو اختیار کرتے رہیں گے۔