عارف علوی سے سی پی این ای کی اسٹینڈنگ کمیٹی کے وفد کی ملاقات

37

اسلام آباد(اے پی پی) صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی سے پیر کو ایوان صدر میںسی پی این ای کی اسٹینڈنگ کمیٹی کے وفد سے ملاقات۔جس میں انہوں نے کہا کہ ملک میں معاشرتی تبدیلی کے لیے ان کا دفتر آئینی کردار ادا کرتا رہے گا، صدر مملکت نے کہا کہ قوم کو جدید افکار اور ٹیکنالوجی سے لیس کرائے بغیرملک کو ترقی یافتہ بننے کا خواب ادھورا رہے گا۔ صدر مملکت نے نشریاتی میڈیا کے کردار کو سراہتے ہوئے خبردار کیا کہ جعلی خبروں کے چیلنجز سے نمٹنے کے لیے میڈیا اسٹیک ہولڈرز کو اضافی احتیاط برتنا ہو گی ۔
انہوں نے کہا کہ حالیہ برسوں میں جعلی خبروں کا کاروبار عروج پر رہا اور موقر خبروں کی گنجائش مدھم پڑ گئی۔ صدر مملکت نے کہا کہ پاکستان، افغانستان میں امن عمل کی بھرپور حمایت کرتا ہے اور اس کی تعمیر نو کے لیے اپنا موثر کردار ادا کر رہا ہے۔ سی پی این ای کے صدر عارف نظامی نے صحافتی برادری کی طرف سے ملک میں صحافتی برادری کی مسلسل حمایت پر صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کا شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ صحافتی برادری کی یہ ذمے داری ہے کہ جعلی خبروں کے رجحان کے مسئلے سے نمٹنے کے لیے نشر و اشاعت سے قبل خبر کی تصدیق ضرور کریں۔ صدر مملکت نے غذائی قلت، نوزائیدہ بچوں کی اموات، آبادی میں اضافہ اور خواتین کے وراثتی حقوق جیسے اہم ترین سماجی مسائل کو اجاگر کرنے کے لیے اپنے بھرپور عزم کا اظہار کیا اور کہا کہ انہوں نے اس حوالے سے تمام شراکت داروں کو اعتماد میں لیا ہے۔ اس موقع پر وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان بھی موجود تھیں۔
سی پی این ای