آئی ایم ایف پروگرام کے بارے میں قوم کو سب بتاؤں گا، اسد عمر

65
اسلام آباد:اسد عمر قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کے چیئرمین منتخب ہونے کے بعد اجلاس سے خطاب کر رہے ہیں
اسلام آباد:اسد عمر قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کے چیئرمین منتخب ہونے کے بعد اجلاس سے خطاب کر رہے ہیں

اسلام آباد (نمائندہ جسارت) سابق وزیرخزانہ اور چیئرمین قائمہ کمیٹی برائے خزانہ اسد عمر نے کہا ہے کہ آئی ایم ایف پروگرام سے متعلق اب قوم کو سب بتاؤں گا۔آئی ایم ایف کے ساتھ مذاکرات کے دوران کچھ نہیں بتا سکتا تھا،اب قوم کوبتاؤں گا کہ کب مذاکرات کا آغازہوا، کیا شرائط تھیں اور کن پراتفاق ہوا ہے۔ انہوں نے قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کی صدارت کرتے ہوئے کہا کہ آئی ایم ایف کے حوالے سے کئی مرتبہ بات کرچکا ہوں۔آئی ایم ایف پروگرام پرکمیٹی کو بریفنگ دی جانی چاہیے۔ اسد عمر نے کہا کہ حکومت کوطے شدہ پروگرام ملتا ہے۔ کمیٹی اس میں تبدیلی کا کہہ سکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف کے ساتھ مذاکرات کے دوران کچھ نہیں بتا سکتا تھا۔ اب قوم کوبتاؤں گا کہ کب مذاکرات کا آغازہوا، کیا شرائط تھیں اور کن پراتفاق ہوا ہے۔اسد عمر نے کہا کہ 22 مئی کواجلاس میں آئی ایم ایف اورایف اے ٹی ایف پرغورکریں گے۔واضح رہے سابق وزیرخزانہ اسد عمر کو چیئرمین قائمہ کمیٹی برائے خزانہ بنا دیا گیا ہے۔ سابق وزیرخزانہ اسد عمر نے کہا کہ سابق چیئرمین فیض اللہ کو کمیٹی کے فرائض بخوبی سرانجام دینے پر مبارکباد پیش کرتا ہوں۔ فیض اللہ کی بطور چیئرمین قائمہ کمیٹی کی کارکردگی بہتر رہی۔پیپلزپارٹی کے رہنماء نوید قمر نے اسد عمر کو چیئرمین قائمہ کمیٹی نامزد کیا۔ نوید قمر نے کہا کہ اب کمیٹی کوبتایا جائے کہ آئی ایم ایف پروگرام میں کیا طے کیا گیا؟ نفیسہ شاہ نے کہا کہ اسدعمرجیسے شخص کی سربراہی میں فنانس کمیٹی کی اہمیت بڑھ جائیگی۔ اسدعمرکوآئی ایم ایف پروگرام کی کافی پیچیدگیوں کاعلم ہے۔ حنا ربانی کھر نے کہا کہ لوگ وزیربننا چاہتے ہیں مگرآپ نے کمیٹی کی چیئرمین شپ لے کراہم فیصلہ کیا۔ کمیٹی کوتمام تفصیلات فراہم کرنے کی ذمہ داری اب آپ پر ہوگی۔