مسجد کی سطح پر امن و انصاف کمیٹیاں تشکیل دی جائیں،متحدہ علما محاذ

36

کراچی(پ ر)متحدہ علماء محاذ پاکستان کے بانی سیکریٹری جنرل مولانا محمد امین انصاری نے مختلف مکاتب فکر کے علماء مشائخ کے وفود سے ملاقاتوں میں گفتگو کرتے ہوئے کہاہے کہ روز بروز گرتی ہوئی معیشت اور بڑھتی ہوئی کمر توڑ مہنگائی کی ابتر صورتحال میں قومی خزانے پر بوجھ کم کرنے کے لیے آسان طریقہ انتخاب وضع کیاجائے ، قومی اسمبلی اس سلسلے میں قانون سازی یقینی بنائے۔ مولانا محمد امین انصاری نے حکومت کومزید تجویز دی کہ تھانہ کی حدود میں ہر مسجد کی سطح پر امن و انصاف کمیٹیاں تشکیل دی جائیں جس کے ذریعے عوام کے مسائل حل ہوسکیں اور ہر قسم کی غیر قانونی، منفی سرگرمیوں ، فرقہ واریت ،دہشتگردی کا خاتمہ اور امن کی فضا قائم ہوسکے۔مساجد کو خلفائے راشدینؓ کی منہج پر لانے اور تھانوں سے پراعتماد عوامی رشتہ جوڑنے کی اشد ضرورت ہے۔ان خیالات کا اظہار مولانا محمد امین انصاری نے ممتاز مذہبی رہنما مولانا مفتی ہارون مطیع اللہ ، جامعہ دعوۃ الحق کے سربراہ مولانا مفتی محمد بخاری، بزرگ عالم دین یادگار اسلاف مولانا عبدالستار توحیدی، جمعیت اہلحدیث پاکستان کے مرکزی رہنما علامہ اختر محمدی اور شیعہ علماء کونسل کے مرکزی رہنما خطیب اہلبیت علامہ علی کرارنقوی کی سربراہی میں ملاقات کے لئے آنے والے علیحدہ علیحدہ وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔علماء نے مشترکہ طور پر 14اکتوبر کو ہونے والے ضمنی الیکشن میں عوام سے بھرپور حصہ لینے اوردیانتدار باکردار افراد کو منتخب کرنے کی اپیل کی۔علماء نے متحدہ علماء محاذ کی 12سالہ امن و اتحاد کی مسلسل کاوشوں کو سراہتے ہوئے مولانا محمد امین انصاری و دیگر قائدین کو اپنے ہر ممکن تعاون کا یقین دلایا۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.