پیپلزپارٹی کا 50واں یوم تاسیس‘ اسلام آباد میں سیاسی قوت کا مظاہرہ‘ ڈکٹیٹروں کا کوئی مستقبل نہیں‘ زرداری

544
اسلام آباد: پیپلزپارٹی کے 50ویں یوم تاسیس پر جلسے میںآصف زرداری‘ بلاول زرداری‘ خورشید شاہ ودیگر ہاتھ ہلا کر کارکنان کے نعروں کا جواب دے رہے ہیں
اسلام آباد: پیپلزپارٹی کے 50ویں یوم تاسیس پر جلسے میںآصف زرداری‘ بلاول زرداری‘ خورشید شاہ ودیگر ہاتھ ہلا کر کارکنان کے نعروں کا جواب دے رہے ہیں

اسلام آباد(نمائندہ جسارت)پیپلزپارٹی نے اپنے50ویں یوم تاسیس پر اسلام آباد میں سیاسی قوت کا مظاہرہ کیا۔ پریڈگراؤنڈ میں منعقد جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے سابق صدر مملکت اور پیپلزپارٹی پارلیمنٹرینز کے سربراہ آصف علی زرداری ، پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول ، قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ ‘ سابق وزرائے اعظم یوسف رضاگیلانی‘ راجاپرویز اشرف اورپیپلزپارٹی پنجاب کے صدر قمر زمان کائرہ نے بھی خطاب کیا۔ آصف زرداری نے کہا کہ ڈکٹیٹروں کا کوئی مستقبل نہیں ،پرویز مشرف چھپ کر باہر بیٹھ گئے ‘وہ پاکستان نہیں آسکتے تو سیاست بدلنے کی کوشش کر رہے ہیں، مگر تبدیلی صرف ووٹ کے ذریعے آئے گی، نوازشریف نے پاکستان کو کنگال کردیا ، ہم نے 2 بار ان کی جمہوریت بچائی لیکن اب نہیں بچائیں گے ،اب اپنی جمہوریت لائیں گے۔ان کے بقول ضروری نہیں کہ موجودہ حکومت عبوری حکومت تک چلے، ہماری کوشش بھی یہی ہوگی کہ عبوری حکومت تک معاملہ نہ جائے ،نوازشریف عبوری حکومت تک نہیں رہیں گے اوریہ نگران حکومت سے پہلے ہی ہارمان جائیں گے۔ زرداری نے کہا کہ گاڈ فادر اور جعلی خان کو یہ بات سمجھ نہیں آرہی کہ ہم اگر کچھ چھوڑ کر نہ جاتے تو یہ عوام کو کچھ نہیں دے سکتے تھے۔ ان کا کہنا تھا کہ جمہوریت پیپلزپارٹی کی قربانیوں کا تحفہہے، ججوں کو کچھ کہنا نہیں چاہتا ، پارلیمنٹرینزکا بھی احتساب ہونا چاہیے۔سابق صدر مملکتنے یہ بھی کہا کہ ،بھارت پاکستان کو نیپال نہیں بنا سکتا ،، کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے ، اگراس کے لیے لڑنا پڑا تو لڑیں گے ، آئیں مل کر پاکستان اور افغانستان کی سرحدیں مضبوط کریں۔آصف زرداری نے بلاول کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ پارٹی کی کمان اب آپ کے سپرد کررہا ہوں۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے بلاول زرداری نے کہا کہ جمہوریت کے بغیر وفاق قائم نہیں رہ سکتا، فیض آباد میں ختم ہونے والی ریاستی رٹ کو پیپلزپارٹی بحال کرے گی، عوام کے تحفظ کے لیے کبھی کسی مورچے کو چھوڑ کر نہیں بھاگے، اپنے نظریے کے تحفظ کا حلف اٹھاتے ہیں ہمیشہ خون سے چراغ روشن کیے ہیں۔اس موقع پر 6نکاتی ایجنڈے کا اعلان بھی کیا گیا جس میں کہا گیا ہے کہپیپلز پارٹی ہر شخص کی میراث ہے جو سیاست اور مذہب کے گٹھ جوڑ نہیں مانتا، ذوالفقار علی بھٹو ، بے نظیر اورآصف زرداری ادوار کی اصلاحات پر عملدرآمد کو یقینی بنایا جائے گا ،استحصالی قوتوں کے خلاف انقلابی جدوجہد کرتے ہوئے حقیقی جمہوری ملک بنائیں گے ،عدلیہ پولیس اور سول سروس میں اصلاحات لائی جائیں گی۔