اسحاق ڈار اور اہلیہ کا سفارتی پاسپورٹ منسوخ،گرفتاری کیلیے انٹڑ پول سے رابطے کا حکم

152

کراچی(اسٹا ف رپورٹر)عدالت عظمیٰ کے حکم کے بعد وفاقی حکومت نے سابق وفاقی وزیرخزانہ اسحاق ڈار اوران کی اہلیہ کے پاسپورٹ منسوخ کردیے ہیں اور ایف آئی اے کو حکم دیا ہے کہ وہ اسحاق ڈار کی گرفتاری کے لیے انٹرپول سے رابطہ کرے۔گزشتہ روز ایف آئی اے کی جانب سے فرانس میں واقع انٹرپول کے مرکزی دفتررابطہ کیا گیااور انہیں اسحاق ڈار کے لیے جاری کیے گئے عدالتی احکامات اور منی لانڈرنگ کیس کی تفصیلات فراہم کیں۔انٹر پول نے یقین دہانی کرادی ہے کہ 3 روز کے اندر اسحاق ڈار کے بارے میں فیصلہ کرکے ایف آئی اے کو آگاہ کردیا جائے گا۔بتایاجاتاہے کہ اسحاق ڈاراور ان کی اہلیہ کے پاس سفارتی پاسپورٹ تھے جو دفتر خارجہ نے منسوخ کردیے ہیں،قانون کے مطابق اسحاق ڈاروفاقی وزیرخزانہ کا عہدہ چھوڑنے کے بعد30روز کے اندراپنااوراپنی اہلیہ کاسفارتی پاسپورٹ واپس کرنے کے پابند تھے جس کے بعدانہیں معمول کے پاسپورٹ جاری کیے جاتے۔قانونی ماہرین کے مطابق پاسپورٹ منسوخی کے باعث اسحاق ڈارکی نقل وحرکت رک جائے گی اوروہ برطانیہ سے کسی ملک کا سفر نہیں کرسکیں گے تاہم وہ سیاسی پناہ لے سکتے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ