دہشتگردی واقعات کی پشت پر امریکی و بھارتی آلہ کار ہیں،لیاقت بلوچ

202

لاہور(نمائندہ جسارت) نائب امیر جماعت اسلامی، سابق پارلیمانی لیڈر لیاقت بلوچ نے لاہور میں دہشت گردی کے واقعے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک بھر میں دہشت گردی کے ہر واقعے کی پشت پر امریکی اور بھارتی ماسٹر مائنڈ اور آلہ کار ہیں۔ پورے ملک میں دہشت گردی کے واقعات بڑھتے جارہے ہیں، بے گناہ انسان لقمہ اجل بن رہے ہیں، قومی سلامتی پالیسی نہ جانے کہاں ہے، حکومت نااہل اور ناکام ہے، حکومتی نااہلی عوام کے جان، مال، عزت کے لیے عذاب بن گئی ہے۔ انارکلی اور ملک بھر میں دہشت گردی کے شکار شہدا، زخمیوں کے خاندانوں کے ساتھ تعزیت اور یکجہتی کا اظہار کرتے ہیں۔ لیاقت بلوچ نے کہا کہ ہر دور میں حکمران معاشی اشاریوں کی بہتری کے منتر پڑھتے اور جھوٹے دعوے کرتے رہتے ہیں، عملاً قومی معیشت مسلسل زوال پذیر ہے۔ آئی ایم ایف شرائط، قرضوں اور سود کا بوجھ، رشوت، کرپشن کی موجودگی میں معاشی اشاریوں کی بہتری کالا جھوٹ ہے۔ عوام کا خون نچوڑکر شرح نمو بہتر نہیں ہوسکتی۔ مہنگی بجلی، ادویات، پیٹرول، کھاد، گیس، جان لیوا ٹیکسوں نے عوام کو بدحال کردیا ہے۔ عمران خان، وزرا اور مشیروں کی تقریریں، تکبر پر مبنی بیانیہ عوام کے زخموں پر نمک چھڑک رہے ہیں۔ یہ نوشتۂ دیوار ہے کہ حکومت ناکام ہے۔ عوامی وفود، علما اور سماجی، بلدیاتی شخصیات سے ملاقات اور گفتگو کرتے ہوئے لیاقت بلوچ نے کہا کہ گوادراور کراچی میں عوامی مسائل پرجماعت اسلامی کے عوامی دھرنوں سے ملک میں بیداری کی لہر پیداہوگئی ہے۔ سندھ اور بلوچستان حکومتوں کی عوام، جمہوریت اور بلدیات دشمنی بے نقاب ہوگئی ہے۔ ملک بھر میں 101 دھرنے عوام کو بیدار، متحرک کردیں گے اور فیصلہ کن دھرنا ملک میں آئین کی حکمرانی، شفاف، آزادانہ انتخابات کا راستہ کھول دے گا۔ نااہل عوام دشمن مہنگائی کی ذمے دار حکومت کا دھڑن تختہ ہوگا۔ لیاقت بلوچ نے علما سے بات کرتے ہوئے کہا کہ قائد اعظم نے اپنی شاہانہ زندگی قربان کرتے ہوئے برصغیر کے مسلمانوں کو آزادی، اسلامی قوانین کا بول بالا کرنے کے لیے جدوجہد کی اور اعلان کردیا کہ دنیا کی نجات اسلامی نظام میں ہی ہے۔ علما، مشائخ ہی ملک میں جوہری انقلابی کردار ادا کریں گے۔