پرویز مشرف کی آل پاکستان مسلم لیگ کی پوری قیادت مستعفی 

58

اسلام آباد (آئی این پی )آل پاکستان مسلم لیگ کے چیئرمین ڈاکٹر محمد امجد،چیف آرگنائزر سید فقیر حسین بخاری، سنیئرنائب صدر چودھری اشرف ، ایڈیشنل جنرل سیکرٹری کامران خان سمیت کئی اعلی عہدیداران اور پارٹی کی سینٹرل ورکنگ کمیٹی کے اراکین کی بڑی تعداد پارٹی عہدوں اور بنیادی رکنیت سے مستعفی ہو گئی ہے۔ اس بات کا اعلان ہفتے کو آل پاکستان مسلم لیگ کے مقامی ہوٹل میں منعقد ہونے والے سینٹرل ورکنگ کمیٹی کے اجلاس کے بعدڈاکٹر محمد امجد نے دیگر رہنماؤں کے ہمراہ ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ 30ستمبر کو اے پی ایم ایل کی سینٹرل ایگزیکٹیو کمیٹی کے اجلاس میں اعلی عہدیداران چیئرمین، چیف آرگنائزر اور سیکرٹری جنرل نے مستعفی ہونے کا اعلان کیا تھا۔ تاہم سی ای سی کے اراکین نے استعفے منظور کرنے کی بجائے سینٹرل ورکنگ کمیٹی سے مشاورت کی تجویز پیش کی تھی جس سلسلے میں ہفتے کو پارٹی کی ورکنگ کمیٹی کا اجلاس بلایا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس دوران پارٹی آئین کو سبوتاژ کرتے ہوئے غیر جمہوری طریقے سے ایک ایسے شخص کو پارٹی چیئرمین بنانے پر مجبور کیا گیا جس کا پارٹی سے کوئی تعلق ہی نہیں رہا۔ ساتھ ہی چیئرمین اور چیف آرگنائزر کے استعفے منظور جبکہ سیکرٹری جنرل کا استعفا نامنظور کرنے کے لیے مجبور کرنے کی کوششیں بھی کی گئیں۔ آئینی اور جمہوری طریقہ کار کے مطابق پارٹی رہنماؤں کا انتخاب سینٹرل ایگزیکٹیو کمیٹی کی تجویز پر سینٹرل ورکنگ کمیٹی کرتی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ