وفاقی سیکرٹری مواصلات کا کراچی نیشنل ہائی وے اتھارٹی دفتر کا دورہ

12

کراچی(اسٹاف رپورٹر) وفاقی سیکرٹری مواصلات شعیب احمد صدیقی نے اپنے دورہ کراچی کے دوران نیشنل ہائی وے اتھارٹی کے علاقائی دفتر کا دورہ کیا ، جہا ں انہیں ممبر ساؤتھ زون این ایچ اے سید شبیر علی شاہ اور جنرل منیجر کراچی ۔حیدر آباد( M۔9 ) عبدالطیف مہیسر نے کراچی۔
حیدر آباد موٹروے کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی۔اجلاس میں سینیٹرڈاکٹر اشوک کمار،میسرز اسکور،ایف ڈبلیو اواورکنسلٹنٹ QAI کے نمائندوں نے شرکت کی۔وفاقی سیکرٹری مواصلات شعیب احمد صدیقی نے موٹروے کی مشکل تعمیر کے ساتھ ساتھ سماجی اور ماحولیاتی آلودگی کی طرف خصوصی توجہ دینے پرماہرین تعمیرات کی کارکردگی کو سراہا۔بریفنگ میں بتایا گیا کہ کراچی حیدر آباد موٹروے، سی پیک کے ایسٹرن روٹ پشاورکراچی موٹروے کا حصہ ہے،جو کراچی پورٹ کو پورے ملک سے ملانے کا اہم رابطہ ہے۔منصوبے کے اسکوپ میں چار رویہ سپر ہائی وے کو سہراب گوٹھ کراچی سے حیدر آبادتک6 لین موٹروے میں تبدیل کرنا ہے۔اس منصوبے کی کل لمبائی 136کلومیٹر ہے،جس میں 8نئے انٹرچینجز اور 2 موجودہ انٹرچینج شامل ہیں۔ اس کے علاوہ 11 پْلوں کو دونوں طرف سے چوڑا کرنا ، ٹول پلازوں کی تعمیراور مسافروں کی سہولت کیلیے دونوں طرف ایک ایک سروس ایریاکی تعمیر بھی منصوبے کا حصہ ہیں۔بریفنگ میں بتایا گیا کہ موٹروے کے ساتھ 2 ٹراماسنٹرز اور 2ا سکول بھی تعمیر کیے گئے ہیں۔دْمبا گوٹھ ٹراما سینٹر کا افتتاح اکتوبر2016 میں کیا گیا جوکہ 12 بیڈ پر مشتمل ہے ،جہاں حادثات سے متاثرہ 745 اور 27600 مقامی مریضوں کو علاج معالجہ کی سہولت فراہم کی گئی۔جبکہ نوری آباد ٹراما سینٹر بھی 12 بیڈ پر مشتمل ہے ،جہاں24گھنٹے ایمرجنسی سروس،ایکسرے،الٹراساؤنڈ،ای سی جی،لیبر روم،انکوبیٹر اور لیبارٹری کی سہولت فراہم کی گئی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.