نیب ،سراج درانی ،وسیم اختر ،پرویز خٹک ودیگر کیخلاف تحقیقات کی منظوری 

102
اسلام آباد،چیئرمین نیب جاوید اقبال کی سربراہی میں ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس ہورہا ہے
اسلام آباد،چیئرمین نیب جاوید اقبال کی سربراہی میں ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس ہورہا ہے

اسلام آباد/ لاہور (نمائندہ جسارت/ اے پی پی) نیب نے وزیر دفاع پرویز خٹک، اسپیکر سندھ اسمبلی آغاسراج درانی اور میئر کراچی وسیم اخترکے خلاف تحقیقات کی منظوری دے دی‘14 انکوائریوں اور 3 انوسٹی گیشن کی بھی منظوری دی گئی۔ تفصیلات کے مطابق ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس قومی احتساب بیورو کے چیئرمین جسٹس (ر)جاوید اقبال کی زیرصدارت نیب ہیڈکوارٹر ز اسلام آباد میں منعقد ہوا۔ قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس نے ڈاکٹر احسان علی، سابق وائس چانسلر عبدا لولی خان یونیورسٹی مردان اور دیگرکے خلاف بدعنوانی کا ریفرنس دائرکرنے کی منظوری دی۔ ملزمان پر مبینہ طور پر آئی ٹی آلات کی خریداری کا ٹھیکا من پسند کمپنیوں کو مہنگے نرخوں پردینے کا الزام ہے جس سے قومی خزانے کو تقریباً 328.366 ملین روپے کا نقصان پہنچا۔ ایگزیکٹو بورڈ اجلاس نے نوابزادہ محمود زیب سابق صوبائی وزیر برائے ٹیکنیکل ایجوکیشن اور دیگر کے خلاف بدعنوانی کا ریفرنس دائرکرنے کی منظوری دی۔ ملزمان پر مبینہ طور پر اختیارات کا نا جائز استعمال کرتے ہوئے 498.96 ایکڑ اراضی سے فاسفیٹ کی ایکسپلوریشن کا لائسنس ارزاں نرخوں پر14980 روپے میں دینے کاالزام ہے جس سے قومی خزانے کو تقریباً 35 کروڑ 52 لاکھ روپے کا نقصان پہنچا۔ ایگزیکٹو بورڈ اجلاس نے اظہار حسین سابق وزیر برائے خوراک حکومت بلوچستان اور دیگر کے خلاف بدعنوانی کا ریفرنس دائرکرنے کی منظوری دی۔ ملزمان پر مبینہ طور پر پی آر سی پشین میں گندم کی تقریباً 35 ہزار بوریوں کی فراہمی میں خوردبردکا الزام ہے جس سے قومی خزانے کو تقریبا21 کروڑ 18 لاکھ روپے کا نقصان پہنچا۔ایگزیکٹو بورڈ اجلاس نے سلطان محمد ہنجرا سابق ممبر قومی اسمبلی اور دیگر کے خلاف بدعنوانی کا ریفرنس دائرکرنے کی منظوری دی۔ ملزمان پر مبینہ طور پر اختیارات کا نا جائز استعمال کرتے ہوئے تھل ڈیولپمنٹ اتھارٹی کی1342کنال سرکاری زمین کے کاغذات میں ہیرا پھیری اور غیرقانونی طور پر الاٹ کرانے کا الزام ہے جس سے قومی خزانے کوتقریباً 190ملین روپے کا نقصان پہنچا۔ ایگزیکٹو بورڈ اجلاس نے چودھری گفتار احمد انجم سابق چیف آپریٹنگ آفیسر میپکو اور دیگر کے خلاف بدعنوانی کا ریفرنس دائرکرنے کی منظوری دی۔ ملزمان پر مبینہ طور پراختیارات کا نا جائز استعمال کرتے ہوئے ٹرسٹ انویسٹمنٹ بینک ملتان میں میپکو کے 200 ملین روپے غیر قانونی طور پررکھنے کا الزام ہے۔ جس سے قومی خزانے کو تقریباً 314 ملین روپے کا نقصان پہنچا۔ علاوہ ازیں احتساب عدالت نے متروکہ وقف املاک بورڈ کے سابق چیئرمین آصف ہاشمی کو 14ستمبر تک جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا ہے‘ نیب لاہور نے آصف ہاشمی کا جوڈیشل ریمانڈ ختم ہونے پر انہیں گزشتہ روز احتساب عدالت میں پیش کیا۔ دریں اثنا نیب لاہور نے ایل ڈی اے کے سابق ڈائریکٹر جنرل احد چیمہ کے گرد گھیرا مزید سخت کر دیا ہے اور ایک نئے ریفرنس کی صورت میں نیب لاہور ناصرف احد چیمہ کے خلاف ایک نیا مقدمہ درج کرے گا بلکہ ان کی دوبارہ گرفتاری بھی متوقع ہے۔ بتایاگیا ہے کہ نیب لاہور نے ایل ڈی اے سٹی اسکینڈل میں احد چیمہ کا نام سامنے آنے پر ان کے خلاف تحقیقات کی منظوری دیتے ہوئے نیب لاہور کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر وقار الحق کو اس سکینڈل کا تحقیقاتی افسر نامزدکر دیا ہے جو اپنی تحقیقات مکمل کرنے کے بعد رپورٹ چیئرمین نیب کو ارسال کریں گے ۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ