لانگ مارچ توڑ پھوڑ کیس،شفقت محمود کی حاضری معافی کی درخواست منظور

114

لاہور کی سیشن عدالت نے لانگ مارچ کے دوران توڑ پھوڑ اور پولیس پر تشدد سمیت تین مختلف مقدمات میں پی ٹی آئی رہنما شفقت محمودکی ایک روزہ حاضری معافی کی درخواست منظور کرتے ہوئے آئندہ سماعت پر طلب کرلیا ہے۔

 ایڈیشنل سیشن جج صائمہ قریشی، صائمہ حسنین اور ایڈیشنل سیشن جج محمد احمد حسنین نے شفقت محمود کے خلاف تین مختلف مقدمات میں عبوری ضمانت پر سماعت کی۔شفقت محمود کے وکلا نے حاضری معافی کی درخواست دائر کی اور موقف اپنایا کہ شفقت محمود اسلام آباد میں سیاسی مصروفیت کے باعث  عدالت پیش نہیں ہو سکتے۔

عدالت ایک دن کی حاضری معافی منظور کرے۔جس پر عدالت نے تھانہ شفیق آباد میں درج مقدمہ میں شفقت محمود کی عبوری ضمانت پر سماعت 6 اگست تک توسیع کا حکم جاری کر دیا، جبکہ تھانہ اسلام پورہ اور فیکٹری ایریا میں درج مقدمات میں شفقت محمود کی عبوری ضمانت میں 5اگست تک توسیع دی گئی ہے۔

سیشن کورٹ نے الگ الگ مقدمات میں پچاس ، 50 ہزار کے مچلکے جمع کرانے کا حکم بھی دیا۔ دریں اثنا عدالت نے پولیس کو شفقت محمود کی گرفتاری سے روک دیا اور متعلقہ پولیس اسٹیشنز سے مقدمات کا مکمل ریکارڈ طلب کیا ہے۔

واضح رہے کہ پولیس نے 25مئی کو ہونے والے پاکستان تحریک انصاف کے لانگ مارچ کے دوران توڑ پھوڑ اور ہنگامہ آرائی کے مقدمات درج کر رکھے ہیں۔