کورونا کا خوف: ترکی میں شادیاں 20 سال کی کم ترین سطح پر پہنچ گئیں

217

انقرہ: کورونا وائرس کی عالمی وبا دنیا بھر میں خوف کی علامت بن گئی،عالمی وبا کی وجہ سے ترکی میں شادی سیزن ٹھپ ہو کر رہ گیا،لاک ڈاوٗن، کرفیو اور تقریبات پر پابندی کے باعث ترکی میں شادیاں 20 سال کی کم ترین سطح پر پہنچ گئیں۔

بین الاقوامی  میڈیا رپورٹس کے مطابق ترک ادارہ شماریات کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ  سال 2020 میں پانچ لاکھ سے کم افراد شادی کے بندھن باندھ سکے، 2001 کے بعد ترکی میں شادیوں کی یہ کم ترین تعداد ہے۔

ترکی کےسرکاری اعداد و شمار کے مطابق 2018 میں ساڑھے چھ لاکھ افراد نے شادیاں کیں لیکن 2020 میں کورونا کی وجہ سے یہ تعداد 4 لاکھ 87 ہزار تک محدود ہو گئی۔

ادارہ شماریات کا کہنا تھا کہ  گذشتہ سال ایک ہزار افراد میں شادی کا تناسب 0.584 فیصد رہا جو 20 سال کی کم ترین شرح ہے،جہاں ایک طرف شادیوں میں کمی آئی وہیں طلاقوں کی شرح بھی کم رہی۔

 ترک ادارہ شماریات نے بتایا کہ 2020 میں مجموعی طور پر ایک لاکھ 35 ہزار طلاقیں ہوئیں جو 2019 کے مقابلے میں 14 فیصد کم ہیں۔

واضح رہے کہ ترکی میں کورونا وائرس کا پہلا کیس 11 مارچ 2020 میں سامنے آیا تھا جس کے بعد حکومت نے سخت ترین پابندیاں عائد کر دی تھیں۔