جھڈو، ریلوے کی حدود میں سے 15 دکانیں اور چھپرا ہوٹل خاکستر

51

جھڈو (نمائندہ جسارت) ریلوے کی حدود میں قائم عارضی بنائی گئی دکانوں میں اچانک آگ لگنے سے 15 دکانیں اور چھپرا نما ہوٹل خاکستر ہوگیا، جس سے لاکھوں روپے کا سامان بھی جل کر راکھ ہوگیا، دکانداروں نے حکومت سے نقصان کے ازالے کا مطالبہ کیاہے۔ جھڈو کے مین اسٹیشن روڈ پر ٹائون کمیٹی آفس کے سامنے ریلوے کی حدود میں عارضی طور پر قائم دکانوں میں ہفتہ و اتوار کی درمیانی شب ہوٹل میں اچانک آگ بھڑک اٹھی، جس نے دیکھتے ہی دیکھتے اردگرد کی تمام دکانوں کو بھی لپیٹ میں لے لیا، جس سے تین موبائل شاپس، چار کیبن، چار فروٹ کی دکانوں اور ایک ہوٹل مکمل طور پر خاکستر ہوگئے جس سے ان دکانوں میں فروخت کے لیے رکھا گیا سامان بھی جل گیا۔ اہل علاقہ نے اپنی مدد آپ کے تحت آگ بجھانے کی کوشش کی۔ ٹائون کمیٹی کی فائر بریگیڈ کی گاڑی خراب ہونے کی وجہ سے ٹنڈو جان محمد اور نوکوٹ سے فائر بریگیڈ کی گاڑیاں تاخیر سے پہنچنے کے باعث اور دکانیں مکمل طور پر جلنے سے دکانداروں کو لاکھوں روپے مالی نقصان کا سامنا ہے۔ دوسری جانب متاثرین نے حکومت سے فوری طور مالی نقصان کے ازالے کا مطالبہ کیا ہے۔