بارش سے تباہی کی تحقیقات کیلیے سندھ ہائیکورٹ میں درخواست

162

کراچی (اسٹاف رپورٹر) سندھ ہائیکورٹ میں حالیہ بارش سے ہونے والی تباہی کی غیر جانبدارانہ تحقیقات کرانے کیلیے آئینی درخواست دائر کردی گئی، درخواست میں موقف اپنایا گیا ہے کہ کراچی میں بارش سے تباہی کی تحقیقات اور ذمے داران کے خلاف کارروائی کی جائے، کراچی میں حالیہ بارش سے شہر مکمل طور پر مفلوج ہوگیا تھا، انتظامیہ کی غفلت نے شہریوں کو سخت اذیت میں مبتلا کیا، مختلف واقعات میں 41 افراد جاں بحق ہوئے، تجاوزات اور غیر قانونی تعمیرات نے سیلابی صورتحال پیدا کردی، کراچی میں تباہی سے انتظامیہ کی غفلت اور نااہلی بھی بے نقاب ہوئی، شہر میں برساتی اور سیوریج کے نالوں پر قبضوں نے شہریوں کی زندگیوں کو خطرے میں ڈالا، متعلقہ اداروں کو تحقیقات اور ذمے داران کے خلاف کارروائی کا حکم دیا جائے، متاثرین کو نقصان کا معاوضہ دیا جائے اور فوری طور پر نالوں اور دیگر مقامات سے تجاوزات ختم کرنے کا حکم دیا جائے۔ درخواست میں چیف سیکرٹری، گورنر ہاؤس، وزیر اعلیٰ ہاؤس، محکمہ داخلہ، سیکرٹری بلدیات، میٹرو پولیٹن کمشنر، تمام کنٹونمنٹ بورڈز، ایم ڈی واٹر بورڈ اور دیگر کو فریق بنایا گیا ہے۔