کراچی پورٹ ٹرسٹ کیمیائی یس واقعے میں مرنے والوں اور متاثرین کا تعلق بندرگاہ یا متصل علاقے سے نہیںہم گیس کے شکار افراد کی مکمل مدد کر رہے ہیں ۔

324

کراچی(اسٹاف رپورٹر) کراچی پورٹ ٹرسٹ کیمیائی گیس کے شکار افراد کی مکمل مدد کر رہا ہے۔کراچی پورٹ ٹرسٹ کے مطابق کراچی پورٹ پرجہازوں سے پی او ایل یا کیمیائی مادے سنبھالتے وقت حفاظتی تدابیر برقرار ہیں، زیرعلاج افراد، اموات کیماڑی کے شمالی حصے سے ہیں بندرگاہ یا متصل علاقے سے نہیں۔کراچی پورٹ ٹرسٹ کے مطابق بغیر تحقیقات کیمیائی اور پی او ایل جہازوں کوسنبھالنے سے اسے جوڑنا درست نہیں۔

کے پی ٹی کے مطابق چیئرمین کے پی ٹی نے کمانڈر کراچی ریئرایڈمرل زاہد الیاس سے مشاورت کی ہے جبکہ پاکستان نیوی کی جانب سے حیاتیاتی و کیمیائی نقصان کنٹرول ٹیم متاثرہ علاقے میں بھیجی دی گئی ہے۔کراچی پورٹ ٹرسٹ نے واضح کیا ہے کہ کیماڑی گیس واقعے میں مرنے والوں اور متاثرین کا تعلق بندرگاہ یا متصل علاقے سے نہیں بلکہ کیماڑی کے شمالی حصے سے ہے، تحقیقات کے بغیر واقعہ کا سبب جہازوں سے گیس کے اخراج کو قرار دینا درست نہیں۔

کے پی ٹی نے واضح کیا ہے کہ کے کراچی پورٹ ٹرسٹ کے اندر سے یا کسی جہاز سے کیمیکل یا گیسوں کا اخراج نہیں ہوا، کراچی پورٹ پر تمام حفاظتی احتیاطی تدابیر برقرار ہیں، کراچی پورٹ ٹرسٹ کیماڑی کے باشندوں کو مکمل مدد فراہم کررہا ہے، کیماڑی میں کے پی ٹی اسپتال کو ہائی الرٹ پر کردیا گیا ہے۔چیئرمین کے پی ٹی ریئر ایڈمرل جمیل اختر نے بھی اس واقعے پر کمانڈر کراچی ریئر ایڈمرل زاہد الیاس سے مشاورت کی ہے، پاکستان نیوی اپنی حیاتیاتی اور کیمیائی نقصان کو کنٹرول کرنے والی ٹیم کو متاثرہ علاقے میں بھیج رہی ہے تاکہ واقعے کے پیچھے حقائق کا پتا لگ سکے۔