بھارت اخلاقی میدان میں جنگ ہارچکا ہے،بلاول زرداری

91
اسکردو: پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول زرداری کے اسکردو پہنچنے پر پھولوں کا گلدستہ اٹھائے بچے استقبال کررہے ہیں
اسکردو: پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول زرداری کے اسکردو پہنچنے پر پھولوں کا گلدستہ اٹھائے بچے استقبال کررہے ہیں

اسکردو(آن لائن ) پاکستان پیپلزپارٹی (پی پی پی) کے چیئرمین بلاول زرداری نے کہا ہے کہ نریندر مودی کا ہندوتوا کا نظریہ ہے اور بھارت اخلاقی میدان میں بری طرح جنگ ہار چکا ہے۔چیئرمین بلاول زرداری نے گلگت بلتستان کا دورہ کیا اور پیپلزپارٹی بلتستان ڈویژن اور اسکردو کے عہدیداروں سے ملاقات کی۔ اس دوران انہیں علاقے کی سیاسی صورتحال سے آگاہ کیا گیا۔اس موقع پر بلاول زرداری نے عہدیداران کو تنظیمی امور کے حوالے سے ہدایت دی اور کارکنان سے خطاب بھی کیا۔بلاول زرداری نے اپنے خطاب میں کہا کہ پاکستان پیپلزپارٹی کشمیریوں کی حقیقی آواز ہے، ذوالفقار علی بھٹو شہید کے کشمیر یوں کے ساتھ وعدوں کو پورا کریں گے۔انہوں نے کہا کہ نریندر مودی کو ویزا تک نہیں ملتا تھا، وہ نہ من موہن ہیں نہ واجپائی۔ ہم شروع سے خبردار کرتے آرہے ہیں کہ مودی کا ہندوتوا کا نظریہ ہے جبکہ بھارت اخلاقی میدان میں بری طرح جنگ ہار چکا ہے۔دوران خطاب بلاول نے وزیراعظم عمران خان پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ایک کٹھ پتلی فاشسٹ کیسے دوسرے کٹھ پتلی فاشسٹ پر تنقید کرسکتا ہے۔اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ایک شخص جو اپنے ملک میں انسانی حقوق کی دھجیاں اڑا رہا ہے وہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی پر کیسے بات کر رہا ہے۔چیئرمین بلاول زرداری کا کہنا تھا کہ میں بلتستان کے لوگوں کو سننے آیا ہوں، میں ان سے ملکی مسائل کے حل پر رائے لینا چاہتا ہوں۔پیپلزپارٹی کے چیئرمین کا کہنا تھا کہ اگر ہمیں اسلام آباد تک لانگ مارچ کرنا پڑے تو مجھے یقین ہے کہ پورا گلگت بلتستان ہمارے ساتھ ہوگا۔