عوام خود دیکھ لیں کہ ملک میں کون کرپٹ ہے اور کون نہیں، سابق وزیرِ اعظم

223

اسلام آباد: مسلم لیگ ن کے رہنما اور سابق وزیرِ اعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا ہے کہ ملک میں کوئی ایسا وزیر نہیں جو کرپٹ نہ ہو، عوام خود دیکھ لیں کہ ملک میں کون کرپٹ ہے اور کون نہیں،  پاکستان کا مسئلہ انتخابی اصلاحات کا نہیں الیکشن چوری کا ہے۔

تفصیلات کے مطابق  اسلام آباد میں پریس کانفرنس کے دوران سابق وزیرِ اعظم شاہد خاقان عباسی کا کہناتھا کہ نام نہاد احتسابی عمل تین سال سے چل رہا ہے،  جب سے کیس چلے ہیں، گیس کی قیمتوں میں واضح اضافہ ہوا ہے جبکہ موجودہ حکومت کی نااہلی کی وجہ سے نظام بیٹھ چکا ہے۔

شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ معیشت کے حوالے سے تمام دعوے ختم ہو گئے ہیں، روز جھوٹ بولنے والے بھی اب نہیں رہے،  عوام بے روزگاری اور غربت میں پس رہے ہیں جبکہ الیکٹرانک ووٹنگ مشین (ای وی ایم) سے متعلق اپوزیشن پہلے دیکھے گی پھر فیصلہ کرے گی۔

سابق وزیرِ اعظم نے مزید کہا کہ پراسیکیوٹر کے طور پر نہ چل سکے تو فیصل چوہدری کو اسپیشل پراسیکیوٹر بنادیا جبکہ فیصل چوہدری کو نیب چیئرمین بنا کر سارا معاملہ ختم کر دیں۔

شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ پاکستان کا مسئلہ انتخابی اصلاحات کا نہیں الیکشن چوری کا ہے، کسی کو عوامی رائے بدلنے کا حق حاصل نہیں، توشہ خانہ نئی چیز نہیں، اس میں چھپانے والی کوئی بات نہیں ہے۔