امریکی انخلاء کے بعد افغانستان میں خانہ جنگی ہو گی، روسی وزیرِ دفاع

154

ماسکو: روسی وزیرِ دفاع سرگئی شوئیگو کا کہنا ہے کہ امریکا کے انخلاء کے بعد افغانستان میں خانہ جنگی ہو گی جبکہ افغانستان کے پڑوسی ممالک اور بین الاقوامی تنظیمیں صورتحال پر توجہ دیں۔

بین الاقوامی میڈیا کے مطابق یہ بات روس کے وزیرِ دفاع سرگئی شوئیگو نے بین الاقوامی سلامتی سے متعلق ماسکو میں ہونے والی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہی ہے، ان  کا مزید کہنا تھاکہ اسلام آباد اور تہران کے بغیر افغان گروہوں کو متحد رکھنا ناممکن ہے۔

انہوں نے کہا ہے کہ افغانستان کے پڑوسی ممالک اور بین الاقوامی تنظیمیں اس صورتِ حال پر توجہ دیں  جبکہ اس حوالے سے  شنگھائی تعاون تنظیم کی صلاحیتوں کو بروئے کار لانا چاہیئے۔

وزیرِ دفاع کا مزید کہنا ہے کہ مشترکہ سلامتی معاہدہ تنظیم ضروری سیکیورٹی اقدامات کرے گی  اور سی ایس ٹی او کے رکن ممالک کی دفاعی صلاحیتوں کو بڑھایا جائے گا۔

یاد رہے امریکی صدر جو بائیڈن نے افغانستان سے امریکی افواج کے انخلا کا باضابطہ اعلان کرتے ہوئے کہا تھاکہ وقت آگیا ہے کہ امریکی کی سب سے طویل جنگ کا خاتمہ کیا جائے اور امریکی فوج کو افغانستان سے واپس بلایا جائے۔

واضح رہے برطانیہ کے ساتھ ساتھ نیٹو نے بھی افغانستان سے اپنی فوجیں واپس نکالنے کا اعلان کردیا ہے۔