اُردن: کورونا وبا کے باعث 140،000 افراد بے روزگار

205

اردن کی غیر سرکاری تنظیم اردن لیبر واچ (جے ایل ڈبلیو) کی جاری کردہ ایک رپورٹ کے مطابق کوویڈ 19 وبائی مرض کی وجہ سے 2020 میں ملک میں 140،000 افراد ملازمتوں سے ہاتھ دھو بیٹھے۔

جے ایل ڈبلیو نے یکم مئی کو منائے جانے والے عالمی ورکرز ڈے کے موقع پر جاری کردہ رپورٹ میں کہا: “مسلسل دوسرے سال دنیا کے مزدوروں کی اکثریت ایک انتہائی مشکل عالمی بحران کا سامنا کر رہی ہے۔ دنیا ہار گئی ہے۔ دسیوں لاکھ ملازمتیں ، اور دسیوں لاکھ کارکنان ذریعہ معاش کھو چکے ہیں۔ “

رپورٹ میں نشاندہی کی گئی کہ اردن بھی اس بحران سے مستثنیٰ نہیں ہے کیونکہ سال 2020 کی آخری سہ ماہی میں بے روزگاری کی شرح 5۔7 فیصد پوائنٹس سے بڑھ کر 24.7 فیصد ہوگئی تھی جبکہ 2019 کی اسی سہ ماہی میں یہ 19.3 فیصد تھی رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ اردن کے نوجوانوں میں بے روزگاری کی شرح غیر معمولی شرح سے بڑھ گئی ہے جو 2020 کے آخر تک 47.8 فیصد ہوگئی۔

رپورٹ میں یہ بھی ذکر کیا گیا ہے کہ اردن میں بیشتر معاشی شعبوں خصوصا تعمیرات ، زراعت ، خوردہ تجارت ، نقل و حمل اور روزمرہ کی عمومی سرگرمیوں میں وبا کے اثرات سے مزدور طبقہ زیادہ متاثر تھا۔