گلگت میں 8سیٹیں ملنے پر سلیکٹرزکو مبارکباد دیتے ہیں،مریم نواز

81

مانسہرہ /لاہور(خبر ایجنسیاں) مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے کہا ہے کہ دھاندلی کے باوجود جعلی حکومت کو گلگت بلتستان کے انتخابات میں صرف 8 سیٹیں مل سکیں، ان 8 سیٹوں کی مبارکباد عمران خان کو نہیں سلیکٹرز کو دیتے ہیں۔مانسہرہ میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے نائب صدر مسلم لیگ ن مریم نواز کا کہنا تھا کہ نواز شریف نے ہزارہ موٹروے کا وعدہ کیا اور پورا کیا، جس نے اینٹ تک نہ لگائی وہ نواز شریف کی موٹر وے پر چالاکی سے اپنی تختی لگا کر چلا گیا۔انہوں نے جلسے کے شرکا سے پوچھا کہ ووٹ چور کا پاکستان اچھا ہے یا نواز شریف کا پاکستان اچھا تھا، کیا 50 لاکھ گھروں سے ایک کمرہ بھی کسی کو ملا؟ان کا کہنا تھا کہ جو ایک یوسی چلانے کے قابل نہ تھا اسے 22کروڑ عوام کی ذمے داری دے دی، جب تک یہ جعلی حکومت ہمارے سروں پر سوار ہے یہ ملک چل سکتا ہے اور نہ ہی غریب کا چولہا جل سکتا ہے، غریبوں کو سستی دوائی مل سکتی ہے اور نہ ہی چینی چوری رک سکتی ہے، جب تک یہ جعلی حکومت ہے اللہ نہ کرے عوام پر مصیبتیں آتی رہیں گی۔مریم نواز کا کہنا تھا کہ گلگت بلتستان میں ایک سے دوسرے کونے تک لوگ نواز شریف کی حمایت میں نکلے، گلگت بلتستا ن کا جعلی نتیجہ آیا تو لوگوں نے تسلیم کرنے سے انکار کر دیا، دھاندلی کے باوجود جی بی میں اس جعلی کو نہیں جیتایاجا سکا۔ان کا کہنا تھا کہ جی بی میں کوئی آواز گونج رہی تھی تو وہ تھا نواز شریف کا بیانیہ، نواز شریف کے بیانیے نے تمہاری سیاست کو دفن کر دیا ہے، نواز شریف کے بیانیے کی وجہ سے فکس میچ کے باوجود تمہیں مینڈیٹ نہیں صرف بیساکھیاں ملیں۔ان کا کہنا تھا کہ سیٹیں 8کے بجائے 7ہو گئیں ایسی عبرت! توبہ، توبہ، ایسی ذلت سے تو گھر بیٹھنا اچھا ہے۔دوسری جانب ن لیگ کی ترجمان مریم اورنگزیب نے وزیراعظم عمران خان کے فیصل آباد میں تاجروں کے خطاب پر ردعمل میں کہا کہ تاجروں کا معاشی قتل کر چکے ہیں،زبردستی سرکاری تقریب میں لایا جاسکتا ہے لیکن نعروں سے ان کی معاشی ترقی نہیں کر سکتے، عمران خان کی نالائقی اور نااہلی اور چوری نے پاکستان کو افریقا بنا دیا ہے ۔