اسٹاک مارکیٹ 5 فیصد گرنے سے 2 گھنٹوں کیلئے ٹریڈنگ روک دی گئی

113

کراچی (اسٹاف رپورٹر)اسٹاک مارکیٹ 2102 پوائنٹس کمی کے بعد ساڑھے پانچ سال کی کم ترین سطح 28 ہزار 564 پوائنٹس پر بند ہوئی۔تفصیلات کے مطابق کاروباری ہفتے کے پہلے روز پاکستان اسٹاک مارکیٹ شدید مندی کی لپیٹ میں رہی، مارکیٹ کا آغاز ساڑھے گیارہ بجے ہوا۔ اور مارکیٹ کھلتے کے ساتھ ہی 5 فیصد گر گئی۔مارکیٹ 5 فیصد گرنے کے بعد 2 گھنٹوں کے لئے ٹریڈنگ روک دی گئی، دو گھنٹے کے بعد ٹریڈنگ بحال ہوئی مگر انڈیکس میں گراوٹ کا سلسلہ تھم نہ سکا۔کاروبار کے اختتام پر مارکیٹ 2102 پوائنٹس کمی کے بعد 100 انڈیکس 28 ہزار 564 پوائنٹس کی سطح پر بند ہوا۔ حصص کی مالیت گھٹ جانے کے سبب سرمایہ کاروں کے 300 ارب روپے سے زائد ڈوب یو م پاکستان کی ایک روزہ تعطیل کے بعد منگل کوپاکستان اسٹاک مارکیٹ پھر مندی کی لپیٹ میں آ گئی، ٹریڈنگ کے ابتدائی اوقات میںحصص کی فروخت کا دباوٗ بڑھنے کے باعث مارکیٹ پھرکریش ہو گئی جس کے بعدمارکیٹ کوسنبھلنے کے لئے ٹریڈنگ دو گھنٹے کے لئے معطل کردی گئی لتاہم ٹریڈنگ بحال ہونے کے بعد بھی مندی کا رجحان برقرار رہا جس کے نتیجے میں کے ایس ای100انڈیکس 30ہزار اور29ہزار کی نفسیاتی حدوں سے گرتے ہوئے 28564.83پوائنٹس کی سطح پر آگیا جس کے باعث سرمایہ کاروں کو 3کھرب 23ا رب 66 کروڑ 36لاکھ روپے کا نقصان اٹھانا پڑا۔مندی کے سبب مارکیٹ کا مجمو عی سرمایہ 59 کھرب 7 ارب 84 کروڑ 59 لاکھ روپے سے گھٹ کر 55 کھرب 84 ارب 18کروڑ23لاکھ روپے ہوگئی ۔اسی طرح کے ایس ای 30انڈیکس 1010.12 پوائنٹس کی کمی سے12526.91 پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 1211.16 پو ائنٹس کے اضافے سے 20895.25پوائنٹس پر بند ہوا ۔ گزشتہ روز285کمپنیوں کے حصص کا کاروبار ہوا جن میں سے24کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ253کمپنیوںمیںکمی اور 8 کمپنیوں کے حصص میں استحکام رہا اس لحاظ سے 88.77فیصد کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں کمی ریکارڈ کی گئی جس کے سبب مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت میں 3 کھرب 23 ارب66کروڑ36لاکھ روپے کی کمی ریکارڈ کی گئی جب کہ لاک ڈاون کے باعث کاروباری حجم صرف 9کروڑ87لاکھ 88ہزار شیئرز تک محدود رہا جوگذشتہ ٹریڈنگ سیشن کے مقابلے میں14کروڑ62لاکھ 9ہزارشیئرز زائد ہے۔گزشتہ روزقیمتوں میں اتارچڑھاؤ کے حساب سے باٹا پاک کے حصص کی قیمت 47.87 روپے کے اضافے سے1408.58روپے اورسیپ ہائر ٹیکس کے حصص کی قیمت33.35روپے اضافے سے 809.99روپے ہوگئی۔جب کہ نمایاں کمی کے لحاظ سے کولگیٹ پامولوکے حصص قیمت 162.79 روپے کمی سے2007.87روپے اور فلپ موریس کے حصص کی قیمت 145.54روپے کمی سے 1795.11 روپے ہوگئی ۔نمایاں کاروباری سرگرمیوں کے لحاظ سے کے الیکٹرک،یونٹی فوڈز، بینک آف پنجاب ،آئل اینڈ گیس ڈیولپمنٹ،ہیسکول پٹرول،فوجی سیمنٹ ،لوٹی کیمکل،پاک پٹرولیم ،پاک انٹر بلک اور جہانگیر صدیق اینڈ کمپنی کے شیئرز سرفہرست رہے ۔